دو نوجوان بہنیں 80 سالہ مردوں سے شادی کر کے کروڑ پتی بن گئیں، عدالت میں انوکھا ترین مقدمہ

دو نوجوان بہنیں 80 سالہ مردوں سے شادی کر کے کروڑ پتی بن گئیں، عدالت میں انوکھا ...
دو نوجوان بہنیں 80 سالہ مردوں سے شادی کر کے کروڑ پتی بن گئیں، عدالت میں انوکھا ترین مقدمہ

  

بیونس آئرس(مانیٹرنگ ڈیسک) جنوبی امریکہ کے ملک ارجنٹینا میں دو نوجوان بہنوں نے 80سال سے زائد عمر کے بابوں سے شادی کی اور دو سالوں میں ہی کروڑ پتی بن گئی۔ میل آن لائن کے مطابق لیلیانا باسوالڈو نامی لڑکی نے 24سال کی عمر میں 82سالہ آئیسڈرو ٹیٹی نامی شخص سے شادی کی جس کے پاس ایک ہزار ایکڑ سے زائد زمین تھی۔ ان دونوں کی شادی 2010ءمیں ہوئی اور دو سال بعد ہی آئیسڈرو کی موت واقع ہو گئی اور لیلیانا کو اس کی جائیداد میں سے 362ایکڑ زمین وراثت میں مل گئی۔

لیلیانو کی بہن نیلڈا باسوالڈو نے بھی اپنی بہن کی دیکھا دیکھی 2016ءمیں آئیسڈرو کے 84سالہ بھائی کے ساتھ شادی کر لی اور اس کا بھی 2018ءمیں انتقال ہو گیا ۔ یوں نیلڈا کو بھی اپنے شوہر کی وراثت میں اپنی بہن کے برابر زمین مل گئی۔ تاہم اب دونوں بہنوں کے خلاف ان کے شوہروں، جو دونوں آپس میں بھائی تھے، کی اصل وارث نے مقدمہ دائر کر رکھا ہے۔ یہ اصل وارث 40سالہ نورما ٹیٹی ہے جو ان دونوں بھائیوں میں سے ایک کی بیٹی ہے جو اس کی پہلی شادی میں سے پیدا ہوئی تھی۔ نورما نے عدالت میں استدعا کر رکھی ہے کہ ”ان دونوں بہنوں نے منصوبہ بندی کے تحت دونوں عمررسیدہ بھائیوں کے ساتھ شادی کی۔ انہیں معلوم تھا کہ وہ زیادہ دیر نہیں جئیں گے اور جلد ہی یہ کروڑوں کی وراثت کی مالک بن جائیں گی۔ چنانچہ ان کا وراثت میں حصہ ختم کیا جائے۔“ واضح رہے کہ پہلی بہن لیلیانا کے ہاں اس شادی سے ایک بیٹی بھی پیدا ہوئی تھی جو اب 9سال کی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -