سندھ حکومت قبلہ درست کرتے ہوئے عملی اقدامات کرے،خرم شیرزمان

سندھ حکومت قبلہ درست کرتے ہوئے عملی اقدامات کرے،خرم شیرزمان

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان تحریک انصاف کراچی کے صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے عوام میں خوف و ہراس پھیلانے کی حدپار کردی ہے۔ وزیر اعلیٰ نے اپنی ڈیڑھ گھنٹے کی پریس کانفرنس میں کہا کہ شہر کی صورتحال بہت ابتر ہے، اسپتالوں میں روزانہ سینکڑوں لاشیں لائی جارہی ہے۔ جناح ہسپتال شہر کا سب سے بڑا سرکاری ہسپتال ہے، ہم یہاں صورتحال دیکھنے آئے تو معلوم ہوا کہ یہاں لائی جانے والی لاشوں میں سے کوئی ایک بھی کورونا وائرس کا مریض نہیں تھا۔ یہ باتیں انہوں نے جناح ہسپتال کے دورے کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہیں۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ رکن سندھ اسمبلی راجہ اظہر، پی ٹی آئی رہنما عمران صدیقی، توقیر احمد اور دیگر موجود تھے۔ خرم شیر زمان نے رہنماوں کے ہمراہ جناح ہسپتال کی ڈائریکٹر سیمی جمالی سے ملاقات کی اور موجودہ صورتحال پر تفصیلی گفتگو کی۔ خرم شیر زما ن نے مزید کہا کہ ہمیں حیرت اس بات کی ہے کہ اس صوبے کا وزیر اعلیٰ عوام کو اعتماد میں لینے کے بجائے عوام میں خوف و ہراس پھیلا رہے ہیں۔ سندھ کے ہسپتالوں میں کورونا وائرس کا ٹیسٹ نہیں ہو رہے۔ جب تک ٹیسٹ نہیں ہونگے تب تک ہمیں معلوم نہیں ہوگا کہ کیا صورتحال ہے۔ سندھ میں روزانہ کی بنیاد پر جتنے ٹیسٹ کئے جارہے ہیں ان کی تعداد بہت کم ہے۔ سندھ کے ہسپتالوں کے حالات بہت خراب ہیں، موجودہ صورتحال میں ہیلتھ ایمرجنسی ہونی چاہئے لیکن پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت عملی اقدامات کے بجائے سیاست کررہی ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ اس شہر کی بڑی آبادی غریب طبقے سے تعلق رکھتی ہے، وزیر اعلیٰ نے 20لاکھ راشن تقسیم کرنے کا وعدہ کیا تھا۔ وزیر اعلیٰ نے بتایا کہ انہوں نے ڈھائی لاکھ لوگوں میں راشن تقسیم کردیا، وزیر اعلیٰ سندھ بتائیں کہ وہ پیسہ کہاں گیا جس سے عوام میں راشن تقسیم ہونا تھا۔ نیب سے درخواست کرتے ہیں کہ اس معاملے پر انکوائری کا آغاز کرے۔وزیر اعلیٰ ہاتھ جوڑ کر کھتے ہیں کہ لوگ گھروں میں رہیں، ہم بھی ہاتھ جوڑ کر وزیر اعلیٰ سے کہتے ہیں کہ عوام کو ان کا راشن پہنچائیں۔ سننے میں آرہا ہے کہ حکومت سندھ صرف اپنے جیالوں کو راشن تقسیم کررہے ہیں۔ خرم شیر زمان نے مزید کہا کہ اس وقت صوبے میں صرف کورونا وائرس کی بات ہورہی ہے، حکومت سندھ بتائے کہ کیا دیگر بیماریا ں ختم ہوچکی ہیں؟جو دیگر بیماریوں میں مبتلا مریض ہسپتال آرہے ہیں ان کا علاج نہیں کیا جارہا۔ سندھ حکومت لاک ڈاون کرنا چاہتی ہے تو کرے لیکن عوام کے لیئے مشکلات میں اضافہ نہ کرے۔ شہر میں راشن کے حصول کے لئے جھگڑے اور فسادات شروع ہو گئے ہیں۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -