بیٹنگ کمپنی کے ساتھ معاہدہ مہنگا پڑ گیا، پاکستانی جرسی پہنتے ہی محمد عامر مشکل میں پھنس گئے

بیٹنگ کمپنی کے ساتھ معاہدہ مہنگا پڑ گیا، پاکستانی جرسی پہنتے ہی محمد عامر ...
بیٹنگ کمپنی کے ساتھ معاہدہ مہنگا پڑ گیا، پاکستانی جرسی پہنتے ہی محمد عامر مشکل میں پھنس گئے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)قومی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر محمد عامر نے سوشل میڈ یا پر تنقید اور پی سی بی سے وارننگ کے بعد بیٹنگ کمپنی کیساتھ ہونے والا معاہدہ معطل کردیا۔

سوشل میڈیا سائٹس پر فاسٹ بولر محمد عامر کو بیٹنگ (جُوا) کمپنیز کے ساتھ معاہدے پر تنقید کا نشانہ بنایا جارہا تھا تاہم گزشتہ روز کرکٹر نے ولف777 نامی بیٹنگ سائٹ سے اپنا ایک سالہ معاہدہ معطل کردیا ہے۔اس معاہدے کے تحت بیٹنگ سائٹ عامر کو 1 کروڑ 25 لاکھ (پاکستانی روپے) دے رہی تھی جبکہ کرکٹر کو اس کے بدلے کمپنی کی توثیق کرنی تھی تاہم کمپنی نے معاہدہ ختم ہونے کے بعد فاسٹ بولر کی تصاویر اور ویڈیوز ہٹادی ہیں۔

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے فاسٹ بولر محمد عامر کو تنبیہ کی گئی ہے۔قومی ٹیم میں واپسی کے بعد محمد عامر نے پی سی بی کو یقین دلایا ہے کہ 'بیٹنگ سے' سیرو گیٹ کمپنی ان کی تصویرآئندہ اپنی اشتہاری مہم کے لیے استعمال نہیں کرے گی۔ پی سی بی نے محمد عامر کو تنبیہ کی ہے کہ حکومت پاکستان کی جانب سے پی سی بی کی بیٹنگ کمپنی کے ساتھ معاہدہ پر پابندی عائد ہے اس لیے وہ ایسی کسی تشہیر کا حصہ نہ بنیں۔ 

پی سی بی ترجمان کے مطابق عامر نے پی سی بی کو یقین دلایا ہے کہ یہ پرانا معاہدہ تھا، کمپنی نے محمد عامر کی ویڈیوز بھی اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس سے ہٹا دی ہیں، ہوسکتا ہے عامر نے معاہدے کی رقم واپس کرتے ہوئے معاہدہ ختم کردیا ہو۔ محمد عامر نے یقین دلایا ہے کہ کمپنی ان کی مزید تصاویرپروموشن کے لیے استعمال نہیں کرے گی۔ دوسری جانب محمد عامر کو سوشل میڈیا پر شائقین کرکٹ کی جانب سے تنقید کا سامنا ہے۔انہوں نےگزشتہ سال ایک غیر ملکی کمپنی سے سوشل میڈیا پر پروموشن کا ایک سال کا معاہدہ کیا تھا، انہوں نے بیٹنگ کمپنی کی 60 پوسٹس کی پروموشن کے لیے ایک کروڑ 25لاکھ روپے کا معاہدہ کیا تھا۔ 

مزید :

کھیل -