برطانیہ:سات سالوں میں لینڈ سلائیڈنگ اندازے سے 10گنا زیادہ ‘ماہرین

برطانیہ:سات سالوں میں لینڈ سلائیڈنگ اندازے سے 10گنا زیادہ ‘ماہرین

لندن(اے پی پی) برطانوی ماہرین کے مطابق گذشتہ 7 سالوں میں ہونے والی لینڈ سلائیڈنگ اندازے سے 10گنا زیادہ ہے جس سے 32ہزار322افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ لینڈ سلائیڈنگ سے ہلاک ہونے والوں کی زیادہ تعداد کا تعلق جنوبی ایشیائ، چین اور لاطینی امریکہ سے ہے۔ برطانیہ کے شمال مشرقی ڈرہم یونیورسٹی کے ماہرین کا کہنا تھا کہ 2004ءسے 2010ءکے دوران 7 سالوںمیں عالمی سطح پر2620 خطرناک لینڈ سلائیڈنگ کے واقعات پیش آئے جن سے تقریباً32ہزار322 افراد ہلاک ہوئے۔ ماہرین کے مطابق لینڈ سلائیڈنگ جنوبی ایشیائی ممالک کے ساتھ ہمالیہ، سری لنکا اورچین میں عموماً گرمیوں کے موسم میں مون سون کے دوران ہوتی ہے۔ انٹرنیشنل لینڈ سلائیڈنگ یونیورسٹی کے چیوگرافی کے پروفیسر اوراس تحقیق کے سربراہ ڈیوڈ پٹلے کا کہنا تھا کہ لینڈ سلائیڈنگ سے پوری دنیا کو خطرات لاحق ہیں لہذا اس کی روک تھام کےلئے اقدامات کرنا ضروری ہے۔

مزید : عالمی منظر