نیویارک ائیرپورٹ پر فائرنگ کی اطلاع کے بعد ائیرپورٹ بند، سکیورٹی ہائی الرٹ، لیکن دراصل آوازیں کس چیز کی تھیں؟ حقیقت سامنے آگئی، جان کر آپ بھی ہنس ہنس کر لوٹ پوٹ ہوجائیں گے

نیویارک ائیرپورٹ پر فائرنگ کی اطلاع کے بعد ائیرپورٹ بند، سکیورٹی ہائی الرٹ، ...
نیویارک ائیرپورٹ پر فائرنگ کی اطلاع کے بعد ائیرپورٹ بند، سکیورٹی ہائی الرٹ، لیکن دراصل آوازیں کس چیز کی تھیں؟ حقیقت سامنے آگئی، جان کر آپ بھی ہنس ہنس کر لوٹ پوٹ ہوجائیں گے

  


نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) دودھ کا جلا چھاچھ بھی پھونک پھونک کر پیتا ہے کے مصداق مغربی ممالک میں دہشت گردی کے حملے کا اس قدر خوف پایا جاتا ہے کہ کوئی پٹاخہ بھی پھوٹ جائے تو منٹوں میں وہ علاقہ خالی ہو جاتا ہے۔ گزشتہ روز امریکی ایئرپورٹ جان ایف کینیڈی پر بھی ایک ایسا ہی واقعہ رونما ہوا ہے جس کے متعلق جان کر آپ ہنسی پر قابو نہیں رکھ پائیں گے۔ ویب سائٹ philly.com کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز جان ایف کینیڈی ایئرپورٹ پر فائرنگ کی آوازیں سنی گئیں جس کے باعث ایئرپورٹ کے 2ٹرمینل فوری طور پر خالی کروا لیے گئے اور تحقیقات شروع کر دی گئیں، مگر جب حقیقت سامنے آئی توایئرپورٹ انتظامیہ کی شرمندگی کی انتہاءنہ رہی۔ این بی سی نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ ایئرپورٹ پر موجود لوگ بڑی تعداد میں ایک ٹی وی سکرین کے سامنے جمع تھے اور ریوڈی جنیرو میں جاری اولمپکس مقابلے دیکھ رہے تھے۔ اسی وقت جیمیکا کے ایتھلیٹ یوسین بولٹ نے 100میٹر کی دوڑ میں مسلسل تیسری بار گولڈ میڈل جیتا جس پر ایئرپورٹ پر موجود لوگوں نے خوشی کے باعث تالیاں بجائیں اور خوشی سے چیخنے چلانے لگے، جس طرح کسی بھی میچ میں فتح حاصل کرنے پر شائقین کرتے ہیں۔ ایئرپورٹ کے دیگر حصوں میں اس شوروغل اور تالیوں کی آواز کا کچھ اور ہی مطلب لیا گیا۔ انہوں نے سمجھا کہ یہ فائرنگ ہوئی ہے اور اس کے نتیجے میں لوگ چیخ و پکار کر رہے ہیں۔ اس پر انتظامیہ نے فوری طور پر 2ٹرمینل خالی کروا لیے اورایئرپورٹ پر ریڈ الرٹ جاری کرتے ہوئے تیزی سے حفاظتی اقدامات شروع کر دیئے۔ فوکس 29نیوز نے بھی این بی سی نیوز کی خبر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایئرپورٹ انتظامیہ نے مبینہ طور پر کھیل سے محظوظ ہونے والے افراد کی تالیوں اور شوروغل کا غلط مطلب لیا اور ایئرپورٹ پر موجود دیگر مسافروں کو خوف و ہراس میں مبتلا کر دیا۔

مزید : بین الاقوامی


loading...