صوبائی حکومت تمام محازوں پر ناکامی سے دوچار ہے ، مولانا گل نصیب

صوبائی حکومت تمام محازوں پر ناکامی سے دوچار ہے ، مولانا گل نصیب

یمرگرہ ( بیو ر و رپو ر ٹ )صو با ئی حکومت تمام محاذ و ں پر بری طرح ناکام ہو چکی ،ناکامی کا اعتراف کر تے ہو ئے فوری مستعفی ہو جا ئے ،بین الاقومی اور ریاستی پالیسی کے بغیر افغانوں کو بے د خل کر کے پختون خواہ حکومت دوریاستوں پا کستان اور اافغانستان کے در میان نفر ت کی بنیاد رکھ دی ہے, 2017میں جمعیت علماء اسلام کے صد سالہ اجتماع ملک کی سیاست کار خ تبدیل کر دئیگا۔سو ری کنڈو ملاکنڈ میں شمولیتی اجتماع سے خطاب کر تے ہو ئے جمعیت علما ء اسلام کے صو با ئی امیر و سابق سینیٹر مولانا گل نصیب خان نے کہا کہ تبدیلی کے نام پر گزشتہ تین سال سے صو بے پر جعلی مینڈ یٹ کے ذریعے مسلط پی ٹی آئی کی صو با ئی حکومت صو بے میں کو ئی میگا پرا جیکٹس شر وع نہ کر سکی ،صو بے میں ایک ساز ش کے تحت مخلوط نظام تعلیم نافذ جبکہ اسلامی تار یخ اور اقدار کو نصاب سے نکالا جا رہا ہیں ،صو بے میں تبدیلی کے نعر ے پر آنی والی حکومت کسی بھی محاذ پر عوام کو ریلیف دینے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے ،جمعیت علماء اسلام کے صوبائی امیر مولانا گل نصیب خان نے کہا کہ ملک پر امریکہ کے وفادار حکمرانی کر رہے ہے پاکستان سمیت مسلم ممالک کے حکمران امریکہ کے صف میں کھڑے ہے اور ملک پر لٹیرئے جاگیردار اور سرمایہ دار مسلط ہیں ملک قدرتی وسائل سے مالا مال ہے لیکن نا اہل قیادت کی وجہ سے لاکھوں افراد بیرون ممالک روزگار کے لئے مقیم ہے تقر یب سے ضلعی امیر مولانا زاہد خان ،جنرل سیکرٹری ،حاجی امین اللہ تحصیل امیرمولانا نبی شاہ نے بھی خطاب کیا ،صوبائی امیر مولانا گل نصیب خان نے کہا کہ جمعیت علما ء اسلام کے صو بائی امیر وسابق سینیٹر مولانا گل نصیب خان نے کہا کہ صو با ئی حکومت کی جانب سے بغیر کسی و اضح ریاستی پا لیسی کے افغان مہاجرین کی پکڑ دھکڑ اورجبری بے د خلی افسو س نا ک امر ہے ،سر حد کے دونوں جانب آباد افغا ن؂ قبائل کی اکثریت پختون ہےْ ،پختون قبا ئل کے صو بہ بھر میں پو لیس کاْ تضحیک آمیر رویہ کسی صو ر ت قابل قبول نہیں ،افغان مہا جرین کو ر یاستی پالیسی کے تحت پاکستان لایا گیا30لاکھ سے زاید مہا جر ین اس وقت ملکی معیشیت اور ملک کو افرادی قوت کی فراہمی میں اہم کردار ادارکر رہے ہیں ،بین الاقومی اور ریاستی پالیسی کے بغیر افغانوں کو بے د خل کر کے پختون خواہ حکومت دوریاستوں پا کستان اور اافغانستان کے در میان نفر ت کی بنیاد رکھ ہی ہیں جو کسی صو ر ت قابل قبول نہیں ،انہوں نے واضح پالیسی کے تحت دوستانہ ماحول میں باعزت طریقے سے افغان مہاجرین کی واپسی پر زور دیا ا امریکہ مسلم ممالک کے وسائل پر قبضہ کرنا چاہتا ہے جبکہ امریکہ پاکستان سمیت اسلامی دنیا میں مادر پدر ازادسوسائٹی چاہتا ہے اور اس مقصد کے لئے امریکہ کی ڈیکٹشن پر قومی اسمبلی میں ہم جنس پرستی کا بل پیش کیا گیا جس کی جمعیت علماء اسلام نے شدید مخالفت کی انہوں نے کہا کہ امریکہ خاندانی نظام اور پردہ کا خاتمہ چاہتا ہے،حکمران امر یکی مفادا ت کی سیاست کر کے و زیر داخلہ ،د فا ع ،تعلیم اور خا ر جہ کی و زارتوں کا انتخاب امر یکہ کے ایما ء پر کر رہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ این جی او ز کے ذریعے 50 ہزارلڑکیوں کو طلاق دے دی گئی ،مغر بی طا قتیں ناٹو ،اقوام متحدہ اور ائی یم ایف کے ذ ر یعے مسلم ممالک پراقتصا دی پا بندی عا ئد کر رہا ہیانہوں نے کہا کہ علماء کرام باطل کے سامنے سیسہ پلائی ہوئی دیوار ہے ،انگر یزوں کا و فادار طبقہ آج بھی ملک پر حکمرانی کر رہا ہے اورمغرب کاپرو ردہ ہے ،انہو ں نے کہا کہ وسائل سے مالا مال ہو نے کے با و جو د 30لاکھ افراد بیر ون ملک مزدوری پر مجبور اور د ر بدر کی ٹھو کریں کھا نے پر مجبور اور بچوں کی تعلیم و تر بیت سے بے خبر ہے جبکہ ہزاروں بچے ہوٹلوں اور مستری خانوں میں مزدوی کرکے ان کا جنسی اوراخلا قی استحصال کیا جارہا ہے حق اور دین اسلام کے لئے 1857 جنگی آزادی میں 13 ہزار علماء کرام او ر 5 لاکھ مسلمانوں نے جانوں کی قربانیاں دی انہوں نے کہا کہ 2017میں جمعیت علماء اسلام کے صد سالہ تقریب کے حوالے سے اجتماع میں ایک کروڑ لوگوں کو جمع کر کے باطل کو دیکھاینگے کہ عوام علماء کرام کے ساتھ ہے ،

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...