اکنامک زون خیر پور کو گیس کی فراہمی خوش آئند ہے ،ناہید میمن

اکنامک زون خیر پور کو گیس کی فراہمی خوش آئند ہے ،ناہید میمن

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ بورڈ آف انویسٹمنٹ کی چیئر پرسن ناہید میمن نے کہا کہ پاکستان نے پہلے اسپیشل اکنامک زون کو سندھ بورڈ آف انویسٹمنٹ کی مسلسل کوششوں کے بعد 3.5ایم ایم سی ایف ڈی گیس کوٹہ منظور کرنا وفاق کا ایک خوش آئند اقدام ہے جس سے سندھ اور وفاقی حکومت کے درمیان توانائی کے شعبے میں روابط اور تعاون کو استحکام ملے ۔انہوں نے کہا کہ خیر پور ایس ای زیڈ کو فاق کی جانب سے مطلوبہ گیس کوٹے کی فراہمی میں تاخیر سے سرمایہ کار پریشان تھے اور اس ضمن میں چیئر پرسن ایس بی آئی کی حیثیت سے اسلام کے مختلف اجلاسوں میں ہم نے وفاقی حکومت کے سامنے اس معاملے کو شد ومد سے اٹھایا کہ ہمیں خیر پور ایس ای زیڈ کے لئے 3.5ایم ایم سی ایف ڈی گیس کا کوٹہ دیا جائے گزشتہ ماہ اپنے دفتر میں اس مسئلے پرپریس کانفرنس منعقد کرکے اس مسئلے کو مزید شدت سے اٹھایا کہ سب سے زیادہ گیس پیدا کرنے والے صوبہ سندھ میں پاکستان کا پہلا اسپیشل اکنامک زون خیر پور گیس کوٹے سے محروم ہے اور وفاقی حکومت پنجاب اور دیگر صوبوں میں نئے اسپیشل اکنامک زون منظور کررہی ہے جبکہ خیر پور کے ایس ای زیڈ کو گیس کی فراہمی کی آئینی زمہ داری پوری نہیں کررہی ۔چیئر پرسن ایس بی آئی ناہید میمن نے کہا کہ اب وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف کے دفتر کی جانب سے خط کے ذریعے ہمیں اگاہ کیا گیا ہے کہ وزیر اعظم نے وزرات پیٹرولیم وقدرتی وسائل کی سمری جس میں کہا گیا تھا کہ سرمایہ کاروں کے اعتماد کے حصول اور ایس ای زیڈ ایکٹ 2012 اور ایس ای زیڈ قواعد 2013کی خلاف ورزی کے تدارک کے لئے خیر پور ایس ای زیڈ کو3.5ایم ایم سی ایف ڈی گیس کا کوٹہ مہیا کیا جائے ۔وزیر اعظم پاکستان نے نہ صرف یہ سمری منظور کی بلکہ بورڈ آف انویسٹمنٹ پاکستان (BOI)کو ہدایت کی کہ وزرات پیٹرولیم وقدرتی وسائل کے ساتھ ملکر ان احکامات پر عملدرآمد کے لئے ترجیحی حکمت عملی مرتب کرنے کے لئے وزرات پیٹرولیم وقدرتی وسائل ،بورڈ آف انویسٹمنٹ پاکستان اوربورڈ آف انویسٹمنٹ کے مابین سہ فریقی اجلاس بلایا جائے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر