بچوں کیلئے ماں کے دودھ کی افادیت بارے آگاہی مہم چلائی جائے ‘ نشاط ڈاھا

بچوں کیلئے ماں کے دودھ کی افادیت بارے آگاہی مہم چلائی جائے ‘ نشاط ڈاھا

خانیوال (بیورونیوز+ڈسٹرکٹ رپورٹر) ایم پی اے نشاط احمد خان ڈاہا نے کہا ہے کہ محکمہ صحت کی لیڈی ہیلتھ ورکرز ماں کا دودھ پلانے کے عالمی ہفتے کے دوران گھر گھر جا کر ماؤں کو ماں کے دودھ کی افادیت بارے آگاہی فراہم کرنے کے لیے اپنی تمام تر صلاحیتیں وقف کردیں تاکہ مائیں پیدائش(بقیہ نمبر31صفحہ12پر )

سے6ماہ کی عمر تک اپنے نوزائیدہ بچوں کو صرف اپنا دودھ پلا کر زندگی بھر کے لیے اپنے بچوں کی صحت و تندرستی کو یقینی بناسکیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے محکمہ صحت کے زیر اہتمام ’’گلوبل بریسٹ فیڈنگ ویک ‘‘کے حوالے سے منعقدہ سیمینار سے خطاب کے دوران کیا ۔ اس موقع پر ای ڈی او فنانس افتخار علی ‘ ای ڈی او ہیلتھ ڈاکٹر فضل کریم ‘ ڈاکٹرم اور ہیلتھ ورکرز کی کثیر تعداد موجود تھی ۔ ایم پی اے نے کہا کہ نوزائیدہ بچوں کو بریسٹ فیڈنگ کرنے کے لیے ماں کی صحت و تندرستی کا خیال رکھنا اشد ضروری ہے ۔گائنالوجسٹ ڈاکٹر بشریٰ ریحان نے بریسٹ فیڈنگ کے میڈیکل فوائد پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ 6ماہ تک صرف ماں کا دودھ اور 2سال تک ایام شیرگی مکمل کرنے سے بچوں کی جسمانی اعضا ء اعصاب اور نفسیات پر انتہائی مثبت اور صحت مندانہ اثرات مرتب ہوتے ہیں جس سے وہ زندگی کے تمام شعبوں میں کامیابیوں سے ہمکنار ہوتے ہیں ۔نیوٹریسٹ سحر اقبال نے بریسٹ فیڈنگ کے سماجی ‘ اقتصادی اور خاندانی فوائد پر خصوصی روشنی ڈالی جبکہ ای ڈی او فنانس افتخار علی نے محکمہ صحت کے افسران اور ہیلتھ ورکرز پر زور دیا کہ وہ ماں کا دودھ کی اہمیت کے ہفتے کے دوران شعور و آگاہی کا کام انتہائی ذمہ داری سے نبھائیں کیونکہ یہ ہماری آنیوالی نسلوں کی پختگی اور ترقی کا کام ہے ۔ڈسٹرکٹ کوارڈینیٹر ہیلتھ ڈاکٹر حسن پراچہ نے پروگرام بارے تفصیلی آگاہی فراہم کی ۔ای ڈی او ہیلتھ ڈاکٹر فضل کریم نے محکمہ صحت کے افسران‘ ڈاکٹرز اور ملازمین پر زور دیا کہ وہ گلوبل بریسٹ فیڈنگ ویک کو 100فی صد کامیاب بنائیں ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر