کوہاٹ سے اسلحہ سمگل کرنے کی کوشش ناکام ،2 گرفتار

کوہاٹ سے اسلحہ سمگل کرنے کی کوشش ناکام ،2 گرفتار

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) کوہاٹ پولیس نے بڑی تعداد میں اسلحہ سمگل کرنے کی کوشش ناکام بنا کر دو بین الاضلاعی سمگلروں کو گاڑی سمیت گرفتار کرلیا ہے۔پکڑے گئے ہتھیارمقامی ساخت کے ہیں جو علاقہ غیر سے بندوبستی علاقوں کو سمگل کئے جارہے تھے۔پولیس ذرائع کے مطابق ایس ایچ او تھانہ جنگل خیل سب انسپکٹر نظر عباس کو خفیہ ذرائع سے اطلاع ملی تھی کہ کسی بھی وقت علاقہ غیر درہ آدم خیل سے اسلحہ کی بھاری کھیپ گاڑی کے ذریعے کوہاٹ کے راستے سمگل کی جائے گی ۔اس اطلاع کی تصدیق کے بعد انہوں نے پولیس نفری کے ہمراہ کوہاٹ پشاور بائی پاس روڈ پر بیانہ چوک میں ناکہ بندی کرتے ہوئے گاڑیوں کی چیکنگ شروع کر رکھی تھی کہ اس دوران درہ آدم خیل سے کوہاٹ شہر آنے والی ایک بلا نمبر مشکوک سوزوکی پک اپ کو تلاشی کی غرض سے روک لیا گیا جسکے سی این جی گیس سلنڈر ٹینکی میں بنے خفیہ خانے سے پولیس نے مجموعی طور پردو ڈبل بیرل شاٹ گن، تیس بور کے تین پستول اور مختلف بور کے پانچ ہزار سے زائد کارتوس برآمد کرلئے۔پولیس نے گاڑی میں سوار ہتھیاروں کے دوبین الاضلاعی سمگلروں رحمان ولی ولد حضرت حسین سکنہ چارسدہ اور ذبیر محمد ولد تاج محمد ساکن محمد زئی کوہاٹ کو گاڑی سمیت حراست میں لیکر فوری طور پر تھانہ جنگل خیل منتقل کردیا جہاں انکے خلاف بڑی تعداد میں ناجائز اسلحہ سمگل کرنے کے جرم میں مقدمہ درج کرلیا گیا۔دریں اثناء جنگل خیل پولیس اور سیکیورٹی فورسز نے منگل کی صبح گھمکول افغان مہاجر کیمپ نمبر 3میں سرچ آپریشن کے دوران سولہ مشتبہ افراد کو حراست میں لے لیا ہے ۔آپریشن کے دوران گرفتار افراد میں غیر قانونی مقیم افغان باشندے بھی شامل ہیں جنکے خلاف ایمیگریشن قوانین کے تحت قانونی کاروائی عمل میں لائی گئی ہے۔کاروائی میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کو ناجائز اسلحہ بھی ملا ہے جسمیں ایک کلاشنکوف،دو پستول ایک رائفل اور درجنوں کارتوس شامل ہیں۔سرچ آپریشن کے دوران حراست میں لئے گئے افراد کو تھانہ جنگل خیل منتقل کردیا گیا ہے جن میں سے بعض افراد کے خلاف ناجائز اسلحہ رکھنے کے جرم میں مقدمات قائم کرلئے گئے ہیں جبکہ گرفتار تمام افراد سے تفتیشی ٹیم پوچھ گچھ کر رہی ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...