پشاور،سیلفی کا جنون،ایک ہی خاندان کے3افراد دریا میں ڈوب کرجاں بحق

پشاور،سیلفی کا جنون،ایک ہی خاندان کے3افراد دریا میں ڈوب کرجاں بحق
پشاور،سیلفی کا جنون،ایک ہی خاندان کے3افراد دریا میں ڈوب کرجاں بحق

  


پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک)پشاور میں سیلفی کے جنون نے ایک ہی خاندان کے تین افراد کی جان لے لی۔تفصیلات کے مطابق بدقسمت خاندان سیر کیلئے آیا ہوا تھا ۔سیاحت کے دوران دریائے کنہار کے کنارے گاڑی روکی گئی تو گیارہ سالہ لڑکی نے دریا کے نزدیک پڑے پتھروں پر سیلفی بنانے کی کوشش کی،اسی دوران اس کا پاو¿ں پھسل گیااور وہ دریا میں جاگری۔لڑکی کے پانی میں گرنے کے بعد اس کی والدہ نے بھی پانی میں چھلانگ لگا دی لیکن تیز لہریں اسے بھی اپنے ساتھ بہا کر لے گئیں۔ ماں اور بیٹی کو ڈوبتا دیکھ کر باپ نے بھی ان کو بچانے کے لیے پانی میں چھلانگ لگا دی اور وہ بھی پانی میں ڈوب گیا۔ ہلاک ہونے والوں میں گیارہ سالہ صافیہ، اس کی والدہ شازیہ اور والد عاطف حسین شامل ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ ہلاک ہونے والے میاں بیوی کا تعلق صوبہ پنجاب سے تھا اور وہ پیشے کے اعتبار سے ڈاکٹرز تھے۔

مزید : قومی


loading...