پش اپس لگانے والے وزیر کے اپنے ضلع میں سپورٹس گراﺅنڈز تباہ حال

پش اپس لگانے والے وزیر کے اپنے ضلع میں سپورٹس گراﺅنڈز تباہ حال
پش اپس لگانے والے وزیر کے اپنے ضلع میں سپورٹس گراﺅنڈز تباہ حال

  


گھوٹکی(ویب ڈیسک) سندھ کے وزیر کھیل محمد بخش مہر کے اپنے ہی حلقے میں نوجوان کھلاڑیوں نے گرائونڈ میں سیوریج کا پانی بھرنے اور انتظامیہ کی نااہلی کے خلاف پش اپس لگا کر وزیرکھیل کے خلاف احتجاج کیا۔تفصیلات کے مطابق سندھ کے وزیر کھیل محمد بخش مہر نے پش اپس لگا کر پنجاب کے وزراءکو چیلنج دیا تو آج ان کے اپنے ہی حلقے گھوٹکی میں نوجوان کھلاڑیوں نے وزیر کھیل سندھ کے خلاف احتجاج ریکارڈ کروایا۔گھوٹکی میں پانے میں ڈوبے گرائونڈ کے سامنے نوجوانوں نے احتجاج کے طور پر پش اپس لگائے اس موقع پر وہاں موجود ایک بزرگ بھی ان کے ساتھ شامل ہوگئے، نوجوانوں نے وزیر کھیل کو پش اپس لگا کر پیغام دیا کہ ”پنجاب کے وزراءکو چیلنچ دینے سے قبل زرا گھوٹکی میں گرائونڈ کی زبوں حالی پر نظر ثانی کریں“۔نوجوان کھلاڑیوں نے وزیر کھیل محمد بخش مہر سے مطالبہ کیا کہ ”وہ پہلے اپنے حلقے کے گرائونڈ میں سیوریج کا پانی و کوڑا کرکٹ کا نوٹس لیں اور اس کی رونقوں کو بحال کریں کیونکہ حکومت کی عدم توجہ کے باعث گھوٹکی کے تمام گرائوند گندگی میں تبدیل ہوچکے، جس کے باعث نوجوان کھیلنے سے محروم ہوگئے ہیں۔یاد رہے گزشتہ روز وزیر کھیل سندھ محمد بخش مہر نے 50 پش اپس لگا کر پنجاب کے وزراءکو چیلنج دیا تھا جسے قبول کرتے ہوئے عابد شیر علی اور طلال چوہدری نے مقابلے کے لیے حامی بھر لی تھی، جبکہ رانا ثناءاللہ نے اپنے ایک بیان میں وزیر کھیل کو ذہنی طور پر ان فٹ قرار دے دیا ہے۔

مزید : گھوٹکی


loading...