نیب نے 18اگست کو طلب کر لیا

نیب نے 18اگست کو طلب کر لیا

لاہور (خبر نگار)قومی احتساب بیورو نیب نے پانامہ کیس کے فیصلہ کی روشنی میں سابقہ وزیراعظم صاحب محمد نواز شریف کے صاحبزادوں حسین نواز اور حسن نوازکو عزیزیہ سٹیل ملزکیس میں 18اگست کو طلب کر لیا ہے اور باقاعدہ طلبی نوٹس جاری کر دیئے ہیں جبکہ وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار اور اس کے بچوں کے خلاف بھی نیب نے تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے جس کے لئے ڈائریکٹر نیب راولپنڈی محمد رضوان خان، ڈی جی نیب شہزاد سلیم پر مشتمل الگ الگ دو اعلیٰ سطحی تحقیقاتی ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ نیب ذرائع کے مطابق سابق وزیر اعظم اور ان کے خاندان کے خلاف پانامہ کیس کی روشنی میں کیسزمیں کاروائی شروع کر دی گئی ہے اور چار ریفرنسز دائر کئے جا رہے ہیں اور اس میں پہلے مرحلے میں سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کے صاحبزادوں حسین نواز اور حسن نواز کو عزیزیہ سٹیل ملز کیس میں طلب کیا گیا ہے۔ نیب ذرائع کے مطابق میاں نواز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف نیب راولپنڈی میں عزیزیہ سٹیل ملز سمیت دیگر کیسز زیر سماعت ہیں۔ جس میں میاں نواز شریف اور ان کے صاحبزادوں حسین نواز اور حسن نواز سے پوچھ گچھ کرنے کیلئے طلبی نوٹس جاری کیے گئے ہیں۔اور تحقیقات کیلئے 18اگست کو باقاعدہ طلب کر لیا گیا ہے۔ نیب ذرائع کے مطابق میاں نواز شریف اور ان کے صاحبزادوں سے نیب لاہور کے دفتر میں پوچھ گچھ کی جائے گئی ۔جس کیلئے ڈی جی نیب راولپنڈی اور ڈی جی نیب لاہور پر مشتمل ایک اعلٰی سطحی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی ہے ۔ نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ دوسرے مرحلہ میں حدیبیہ پیپر ملز اور رائے ونڈ روڈ کیس کی تحقیقات کی جائے گی۔ نیب ترجمان کے مطابق حدیبیہ پیپرملز کیس گزشتہ کئی سالوں سے پینڈنگ پڑا ہے۔نیب ترجمان کے مطابق میاں برادران کے خلاف پانامہ کیس کی روشنی میں کھلنے والے کیسوں سمیت پہلے سے پڑے پینڈنگ کیسوں پر کارروائی شروع کر دی گئی ہے اور اس میں مرحلہ وار تحقیقات کی جا رہی ہیں۔ نیب ذرائع کے مطابق ڈائریکٹر نیب راولپنڈی رضوان خان کی نگرانی میں 7 رکنی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی ہے جو کہ سابق وزیر اعظم کے اثاثہ جات اور لندن اپارٹمنٹ کی تحقیقات کرے گی جبکہ ڈی جی نیب لاہور شہزاد سلیم کی نگرانی میں ڈائریکٹر نذیر اولکھ اور عمران ڈوگر پر مشتمل تین رکنی اعلیٰ سطحی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی ہے جو کہ لندن فلیٹس کے ساتھ ساتھ حسین، حسن نواز اور مریم نوازاور کیپٹن (ر)صفدر کے اثاثوں کی بھی چھان بین کرے گی ۔

نیب میں طلبی

مزید : صفحہ اول