پاکستان نے اللہ کے فضل و کرم سے دہشتگردی پر قابو پالیا ہے :ممنون حسین

پاکستان نے اللہ کے فضل و کرم سے دہشتگردی پر قابو پالیا ہے :ممنون حسین

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)صدر مملکت ممنون حسین نے کہا ہے کہ پاکستان متحدہ عرب امارات کے ساتھ اپنے تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے،اس سلسلے میں شیخ زاید بن سلطان النہیان کے ورثے کو مزید آگے بڑھانے کی ضرورت ہے۔صدر مملکت نے یہ بات متحدہ امارات کے سبکدوش ہونے والے سفیر عیسی عبداللہ الباشا النعیمی سے بات چیت کرتے ہوئے کہی جنھوں نے بدھ کو ایوان صدر میں ان سے ملاقات کی۔صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان اس خطے میں دہشت گردی کا سب سے بڑا ہدف تھا لیکن اللہ تعالی کے فضل و کرم سے اس پر بڑی حد تک قابو پالیا گیا ہے ۔جلد ہی اس فتنے کا مکمل خاتمہ کردیا جائے گا۔اس کے بعد ملک میں اقتصادی سرگرمیوں کی رفتار تیز ہوجائے گی۔صدر مملکت نے کہا کہ پاک امارات تعلقات امارات کے بانی شیخ زاید بن سلطان النہیان کا شاندار ورثہ ہیں جس سے رہنمائی حاصل کرتے ہوئے اس میں مزید اضافے کی ضرورت ہے۔انھوں نے کہا کہ شیخ زاید بن سلطان النہیان پاکستان کے عظیم دوست تھے ،مجھے خوشی ہے کہ ان کے جانشین بھی ان کے نقش قدم پر چلتے ہوئے دونوں برادر ملکوں کے درمیان مزید قربت اور گرم جوشی پیدا کررہے ہیں۔انھوں سبکدوش ہونے والے سفیر کی خدمات کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ انھوں نے دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات میں مزید گہرائی پیدا کرنے کے لیے شاندار خدمات انجام دیں،وہ توقع کرتے ہیں کہ ان کے جانشین بھی ان ہی خطوط پر کام کریں گے۔ انھوں نے کہا کہ وہ امارات کی قیادت تک ان کا خیر سگالی اور نیک تمناوں کا پیغام پہنچا دیں۔صدر مملکت نے کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں شاندار تعاون ہورہا ہے جس میں مزید اضافے کی ضرورت ہے تاکہ دونوں ملک ایک دوسرے کی صلاحیت اور مہارت سے فائدہ اٹھا سکیں،دریں اثناء صدر مملکت ممنون حسین نے ایوان صدر میں آغا خان کونسل کے پاکستان میں صدر حافظ شیرعلی سے گفتگو کرتے ہوئے آغا خان ڈویویلپمنٹ نیٹ ورک کی کاوشوں کی تعریف کی اور کہا کہ شمالی علاقہ جات میں آغا خان فانڈیشن اور آغا خان ہیلتھ سروسز کا کردار بہت سے شعبوں میں نمایا ں ہے۔انھوں نے کہا کہ پرنس کریم آغا خان نیاپنے دادا کی طرح صحت، تعلیم، ثقافت اور اقتصادی خود مختاری کے شعبوں کو بہت اہمیت دی ہے اور اس پرٹھوس کام کیا ہے جس سے علاقی کے مسائل حل ہوئیاور ملک کے دور افتادہ علاقوں میں لوگوں کو سہولیات فراہم ہوئیں۔اس موقع پر پرنس کریم آغا خان کو ان کی امامت کی ڈائمنڈ جوبلی کے موقع پر مبارک باد کے جواب میں پرنس کریم آغا خان کے شکریہ کا خط بھی صدر مملکت کو پیش کیا ۔ صدر مملکت نے پرنس کریم آغا خان کے دادا سر سلطان شاہ آغا خان بطور آل انڈیا مسلم لیگ کے پہلے صدر کے کردار کو بھی سراہا۔پرنس کریم آغا خان نے اپنے پیغام میں کہا کہ پاکستان سیان کے خاندان کا تعلق قیام پاکستان کے زمانیسیہی مضبوط ہے۔ پرنس آغا خان نے صدر مملکت اور حکومت پاکستان کی مسلسل حمایت کا شکریہ ادا کیا جس کی بدولت بہت سے اہم فلاحی منصوبوں پر کام شروع کیا جا سکا۔حافظ شیرعلی نے آغا خان ڈویویلپمنٹ نیٹ ورک کی حالیہ سرگرمیوں کے متعلق صدر پاکستان کو بریفنگ بھی دی۔اس موقع پر صدر مملکت نے حکومت اور پاکستانی عوام کی جانب سے پرنس آغا خان کے لئے نیک خواہشات کا پیغام بھی پہنچایا۔

مزید : کراچی صفحہ اول