ہیومن رائٹس واچ کی بھارت کی طرف سے روہنگیا مسلمانوں کو زبردستی واپس برما بھیجنے کے فیصلے پر شدید تنقید

ہیومن رائٹس واچ کی بھارت کی طرف سے روہنگیا مسلمانوں کو زبردستی واپس برما ...
ہیومن رائٹس واچ کی بھارت کی طرف سے روہنگیا مسلمانوں کو زبردستی واپس برما بھیجنے کے فیصلے پر شدید تنقید

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

واشنگٹن (صباح نیوز) انسانی حقوق کی بین الاقوامی تنظیم ہیومن رائٹس واچ نے بھارت کی طرف سے برما کے روہنگیا مسلمانوں کو زبردستی واپس ان کے ملک بھیجنے کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے ۔ ہیومن رائٹس واچ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بھارت ہجرت کر کے آنے والے روہنگیا مسلمانوں کے حوالے سے بین الاقوامی انسانی حقوق کا احترام کرے ۔ ہجرت کر کے آنے والے مہاجرین کو بین الاقوامی قوانین کے تحت زبردستی نہیں بھیجا جا سکتا کیونکہ روہنگیا مسلمانوں کو برما میں شدید خطرات لاحق ہیں اور مظالم کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ان کے ملک چھوڑنے کی وجہ بھی برما کی سیکیورٹی فورسز کے منظم مظالم ہیں ۔

واضح رہے کہ بھارتی وزیر مملکت برائے داخلہ کیرن ریجوجیو نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ بھارت میں ہجرت کر کے آنے والے روہنگیا مسلمانوں کو زبردستی واپس بھیجنے کے احکامات جاری کر دئیے گئے ہیں ۔ اس وقت بھارت میں 40 ہزار روہنگیا مسلمان پناہ لیے ہوئے ہیں ۔

مزید : بین الاقوامی