’’روسیوں نے پاکستانی ترانہ گایا‘‘ ماسکو میں پاکستان کے یوم آزادی کے سلسلہ میں تقریب

’’روسیوں نے پاکستانی ترانہ گایا‘‘ ماسکو میں پاکستان کے یوم آزادی کے سلسلہ ...
’’روسیوں نے پاکستانی ترانہ گایا‘‘ ماسکو میں پاکستان کے یوم آزادی کے سلسلہ میں تقریب

  

ماسکو( اشتیاق ہمدانی سے)پاکستانی سفارت خانہ میں 70 واں جشن آزادی سفیر پاکستان قاضی محمد خلیل اللہ کی زیر قیادت منایا گیا۔پرچم کشائی کی تقریب میں قونصلر بلال وحید نے اسلامی جمہوریہ پاکستان کے صدر ممنون حسین اور سفارت خانہ پاکستان ماسکو کے سیکنڈ سیکرٹری مبشرخان نے وزیر اعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی کا 70 ویں یوم آزادی پاکستان کے موقع پر قوم کے نام پیغام پڑھ کر سنایا۔ پاکستانی سفیر قاضی محمد خلیل اللہ نے قومی سبز ہلالی پرچم کو قومی ترانہ کی سریلی دھنوں کے ساتھ ماسکو کی فضاؤں میں لہرایا۔اس موقع پر انہوں نے خطاب کرتے ھوئے کہاکہ 70 سالوں میں پاکستان نے اپنا دفاع مضبوط کیا ھے۔کوئی پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے نہیں دیکھ سکتا۔ ھم نے جمہوریت اور معیشت کو مضبوط کیا ھے۔اس موقع پر ملی نغمے بھی پیش کئے گئے۔ سفیر پاکستان قاضی محمد خلیل اللہ نے بچوں میں تحائف تقسیم کئے۔

بعدازاں پاکستانی دھنوں اور نغموں کے ساتھ آزادی کی شام منائی گئی ، جس میں سفارت کاروں ، روسی وزارت خارجہ میں ایشیائی ممالک کے ڈیسک کے ڈپٹی ڈائریکٹر دانیالہ گانچ، پاکستان روس تھنک ٹینکس کے ممبران، فرینڈزآف پاکستان، پاکستانی کمیونٹی کی خواتین ،بچوں، نوجوانوں اور بزرگوں ، مقامی سول سوسائٹی سے وابستہ دانشوروں، صحافیوں نے پاکستان کے ساتھ اپنی محبت کا ثبوت فراہم کرتے ہوئے بھر پور شرکت کی۔

پروقار تقریب کا آغاز سفارت خانہ ماسکو کے سٹاف ممبر فہد مشتاق کی تلاوت قرآن پاک سے کیا گیا ۔ جس کے بعد پاکستان اور روس کے ترانے بجائے گئے۔اس موقع پر روسیوں نے مل کر پاکستان کا قومی ترانہ بھی گایا ۔اس موقع پر رشین مقررین کی بڑی تعداد نے خطاب کیا۔ جن میں ولادیمیر مخائیلو، گیناڈی ادیو ، لدمیلہ ادیوہ ، انڈریو کوریبکو ،شامل تھے۔ اپنے اپنے خطاب میں مقررین نے پاکستان کے ساتھ والہانہ محبت ، اور پاکستانیوں کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

روس کے ساتھ تعلقات کا ذکر کرتے ھوئے قاضی محمد خلیل اللہ نے کہا کہ روس کے ساتھ ھمارے تعلقات باہمی اعتماد ، اور احترام مبنی ہیں۔ اور تمام علاقائی اور عالمی مسائل پر ہمارا موقف یکساں ھے۔، روس اور پاکستان فوجی تعاون کے ساتھ ساتھ توانائی کے میدان میں بھی تعاون بڑھانا چاہتے ہیں۔ دونوں ممالک کے تعلقات ٹریڈ ، انڈسٹری ، دفاع ، انفراسٹرکچر اور ایل این جی فیلڈز میں مسلسل آگے بڑھ رھے ہیں، پاکستان کے عوام اور حکومت ، روس کے ساتھ تعلقات کو بڑی اہمیت دیتے ہیں۔ بالخصوص ہم خطہ میں امن اور انسداد دہشتگردی کے شعبہ میں تعاون کے لئے تیار ہیں۔ قاضی محمد خلیل اللہ نے کہا کہ ایک اعلی سطح کا پاکستانی عسکری وفد 2017" کی فوجی نمائش میں حصہ لے گا ، جو کہ ماسکو کے نواحی علاقے میں 22 سے 27 اگست تک ہوگی۔

تقریب میں محمد اشرف راجپوت ، محبوب بھٹی ، استاد ندیم خان نے سریلی آواز میں ملی نغمے پیش کر کے جشن کا سماں باندھ دیا اور تقریب کو چار چاند لگادئے ۔

اس موقع پر حکومت پاکستان کی جانب سے روسی وزارت خارجہ میں ایشیائی ممالک کے ڈیسک کے ڈپٹی ڈائریکٹر دانیالہ گانچ کو یادگار آزادی ایوارڈ دیا گیا. پاکستان روس تعلقات کے فروغ کے لئے خدمات کے اعتراف میں سفیر پاکستان قاضی محمد خلیل اللہ نے ولادیمیر مخائیلو، گینادی ادیو، انڈریو کوریبکو ، لدمیلہ ادیوہ ، کو یادگار آزادی ایوارڈ سے نوازا، جبکہ روسی وزارت خارجہ میں ایشیائی ممالک کے ڈیسک کے ڈپٹی ڈائریکٹر دانیالہ گانچ، نے تجارتی تعلقات میں سرگرم کردار ادا کرنے پر مشہور بزنس مین طارق چودھری، شہزاد شیخ ،یوسف آصف جبکہ کمیونٹی خدمات پر کمیونٹی صدر ملک شہباز ، خلیل الرحمان ،اور روس میں پاکستانی اور رشین میڈیا میں صحافتی خدمات کے اعتراف میں صدائے روس کے ایڈیٹر سید اشتیاق حسین ہمدانی کو یادگار ازادی ایوارڈ سے نوازا، جبکہ موسیقی کا ساماں باندھنے والے اشرف راجپوت ، محبوب بھٹی ، استاد ندیم خان کو بھی آزادی ایوارڈ سے نوازا گیا.

مزید : بین الاقوامی