نوکیا نے پہلی مرتبہ اینڈرائیڈ سمارٹ فون متعارف کروادیا اور اس میں ا یک ایسا شاندار فیچرڈال دیا جو اب تک کسی فون میں نہ تھا، پاکستانیوں کو حد سے زیادہ پسند آئے گا کیونکہ۔۔۔

نوکیا نے پہلی مرتبہ اینڈرائیڈ سمارٹ فون متعارف کروادیا اور اس میں ا یک ایسا ...
نوکیا نے پہلی مرتبہ اینڈرائیڈ سمارٹ فون متعارف کروادیا اور اس میں ا یک ایسا شاندار فیچرڈال دیا جو اب تک کسی فون میں نہ تھا، پاکستانیوں کو حد سے زیادہ پسند آئے گا کیونکہ۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ہیلسنکی(نیوز ڈیسک)موبائل فون بنانے والی ماضی کی مشہور کمپنی نوکیا ایک بار پھر مارکیٹ میں واپس آگئی ہے، اور واپس بھی ایسی دھوم دھام سے آئی ہے کہ ایپل اور سام سنگ جیسی بڑی بڑی کمپنیوں کے چھکے چھوٹ گئے ہیں۔ نوکیا پہلی بار اینڈرائڈ سمارٹ فون متعارف کروا رہی ہے لیکن ایسے نئے فیچرز کے ساتھ کہ جو پہلے کسی فون میں نہیں دیکھے گئے۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق کمپنی ’نوکیا8‘ کے نام سے اینڈرائڈ سمارٹ فون متعارف کروا رہی ہے جس میں ’ڈوئل سائیڈ کیمرے‘ کا بالکل نیا اور انوکھا فیچر شامل کیا گیا ہے۔ اس ٹیکنالوجی کی مدد سے فرنٹ اور بیک کیمرے سے بیک وقت تصاویر اور ویڈیوز بنائی جاسکیں گی اور ان دونوں کیمروں کی ریکارڈنگ کا رزلٹ ایک ہی تصویر یا ویڈیو کی صورت میں کمبائن کیا جا سکے گا۔ دونوں کیمروں کی ریکارڈنگ سے بنائی گئی کمبائن تصویر یا ویڈیو کو نوکیا نے ’بوتھی‘ کا نام دیا ہے۔

واٹس ایپ نے اب ایسا نیا فیچر متعارف کروانے کا فیصلہ کرلیا کہ آپ کا خرچہ کئی گنا بڑھ جائے گا

نئے ہینڈ سیٹ کی لمبائی 151.5 ملی میٹر، چوڑائی 73.7 ملی میٹر اور موٹائی 7.9 ملی میٹر ہے۔ اس کا وزن 160 گرام ہے جبکہ فرنٹ اور بیک دونوں کیمرے 13 میگا پگسل کے ہیں۔ یہ موبائل فون چار رنگوں میں پیش کیا جا رہا ہے۔ اس میں ایک اور نیا فیچر ’سپیشل آڈیو ٹیکنالوجی‘ بھی متعارف کروایا جا رہا ہے جو کہ پلے بیک ساﺅنڈ کو مختلف سمتوں میں نشر کرے گا۔

نوکیا8 کا ڈسپلے 5.3 انچ 2K IPS LCD QHDہے، جس کی پگسل ڈینسٹی 554 پی پی آئی ہے۔مزید بتایا گیا ہے کہ 64 جی بی اندرونی میموری اور مائیکروایس ڈی کارڈ سلاٹ سے لیس اس موبائل فون میں اینڈرائیڈ نوگاٹ آپریٹنگ سسٹم استعمال کیا گیا ہے۔ بہترین پراسسنگ سپیڈ کے لئے اسے جدید ترین کوالکوم کوئیک چارجTM-3.0 کمپیٹبل پروسیسر سے لیس کیا گیا ہے۔ فون کی قیمت 700 ڈالر (تقریباً 70ہزار پاکستانی روپے) ہوگی اور اس کی فروخت ستمبر کے آغاز سے متوقع ہے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی