وہ آدمی جس نے 2 برس میں 39 دلہنوں کی زندگی تباہ کردی، ہر ایک لڑکی کو رونے پر مجبور کردیا

وہ آدمی جس نے 2 برس میں 39 دلہنوں کی زندگی تباہ کردی، ہر ایک لڑکی کو رونے پر ...
وہ آدمی جس نے 2 برس میں 39 دلہنوں کی زندگی تباہ کردی، ہر ایک لڑکی کو رونے پر مجبور کردیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن(نیوز ڈیسک) کسی بھی دلہن کے لئے شادی کا دن زندگی کا خوبصورت ترین لمحہ ہوتا ہے لیکن برطانیہ کی درجنوں بدقسمت دلہنیں ایک شیطان صفت شخص کی وجہ سے عین اپنی شادی کے دن رونے پر مجبور ہو گئیں۔

دی میٹرو کی رپورٹ کے مطابق پولیس نے کریگ ولیمسن نامی فراڈئیے کو گرفتار کیا ہے جس نے گزشتہ دو برس کے دوران 39 دلہنوں کی شادی کے لئے جعلی بکنگ کی اور ڈھیروں رقم اکٹھی کر کے سپین کے سیاحتی جزیرے ابیزا فرار ہوگیا۔ اس نے تمام شادیوں کی بکنگ ’دار گتری کیسل‘ نامی کمپنی کا نام استعمال کرتے ہوئے کی، جس میں وہ خود بھی شراکت دار تھا۔ جعلی بکنگ کا خمیازہ پیچھے رہ جانے والے اس کے شراکت دار ڈین پینا کو بھگتنا پڑا اور وہ اب تک اس مد میں ایک لاکھ 30ہزار پاﺅنڈ (تقریباً دو کروڑ پاکستانی روپے) ادا کرچکے ہیں۔

نوکری کیلئے گھر سے گئی نوجوان لڑکی کئی دن واپس نہ آئی، پھر ایک دن اس کی کال آئی تو ایسی بات کہہ دی کہ والدین کو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، کہاں تھی اور زبردستی کیا شرمناک کام کروایا جارہا تھا؟ کبھی تصور بھی نہ کرسکتے تھے

عدالت کو ایک خاتون ایلس کینن نے بتایا کہ انہوں نے کریگ کو 19ہزار پاﺅنڈ ادا کئے تھے لیکن شادی کے دن انہیں پتہ چلا کہ ان کی کوئی بکنگ نہیں کی گئی تھی۔ اسی طرح میگن میک نامی خاتون کا کہنا تھا کہ وہ جب اپنی بکنگ کی تفصیلات جاننے کیلئے پہنچیں تو پتہ چلا کہ بتایا گیا شادی ہال دو اور دلہنوں کے نام بھی بک کیا جاچکا تھا۔ ایک تیسری دلہن کی والدہ کیلی فرگوسن نے بتایا کہ انہوں نے بھی کریگ کو 19ہزار پاﺅنڈ دئیے تھے لیکن بعد میں پتہ چلا کہ انہیں جو شادی ہال دیا گیا تھا وہ کسی اور کی شادی کیلئے بک تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس