پر تشدد مظاہروں ،بندشوں اور مکمل ہڑتال کے باوجود ہزاروں افراد کی ایوب لون شہید کی نماز جنازہ میں شرکت ،قابض بھارتی فوج نے مزید 2 کشمیری شہید کر دیئے ،درجنوں زخمی

پر تشدد مظاہروں ،بندشوں اور مکمل ہڑتال کے باوجود ہزاروں افراد کی ایوب لون ...
پر تشدد مظاہروں ،بندشوں اور مکمل ہڑتال کے باوجود ہزاروں افراد کی ایوب لون شہید کی نماز جنازہ میں شرکت ،قابض بھارتی فوج نے مزید 2 کشمیری شہید کر دیئے ،درجنوں زخمی

  

سرینگر (ڈیلی پاکستان آن لائن)مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران جمعرات کو ضلع بانڈی پورہ میں دو کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا۔ قابض  فوجیوں نے ان نوجوانوں کو  بانڈی پورہ  کے علاقے گریز میں بیم نالہ کے قریب ایک آپریشن کے دوران شہید کیا،  آخری اطلاعات ملنے تک علاقے میں قابض بھارتی فوج کا آپریشن جاری تھا،دوسری طرف  درجنوں دیہات سے ہزاروں لوگوں نے کٹھ پتلی انتظامیہ کی طرف سے عائد کردہ پابندیوں کے باوجود شہید ایوب لو ن کے آبائی گاؤں لیلہار کی طرف مارچ کیا ،  بھارتی فورسز نے لوگوں کے اجتماع کو محدود کرنے کے لیے کاکہ پورہ کے تمام داخلی اور خارجی راستے سیل کر دیے تھے تاہم لوگ باغات اور دیگر متبادل راستوں سے پیدل نما ز جنازہ کے مقام پر پہنچے ، پاکستانی پرچم میں لپیٹے گئے ایوب لون کے جسد خاکی کوآنسوؤں اور آہوں کے درمیان سپرد خاک کیا گیا ،  اس موقع پر لوگوں نے پاکستانی پرچم لہرائے اور آزادی اورپاکستان کے حق میں اور بھارت کے خلاف فلک شگاف نعرے لگائے۔

بھارتی فوجیوں نے محمد ایوب لون کو گزشتہ روز ضلع پلوامہ کے علاقے بانڈر پورہ میں محاصرے کی ایک کارروائی کے دوران شہید کیا تھا۔ نماز جنازہ کے بعد لوگوں نے کاکہ پورہ میں زبردست بھارت مخالف مظاہرے کیے۔ مظاہرین اور علاقے میں بڑی تعداد میں تعینات بھارتی فورسز کے اہلکاروں کے درمیان شدید جھڑپیں ہوئیں۔بھارتی فوجیوں اور پولیس اہلکاروں نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہو گئے، ایک نوجوان آنسو گیس کا گولہ لگنے سے زخمی ہوا۔ ادھر محمد ایوب لون کی شہادت پر آج جنوبی کشمیر میں پلوامہ ، کاکہ پورہ ، پامپور اور دیگر علاقوں میں مکمل ہڑتال کی گئی۔ تمام دکانیں ، تجارتی مراکز ، سکول اور کالج بند رہے اور سڑکوں پر ٹریفک معطل رہی ۔ کٹھ پتلی انتظامیہ نے ضلع میں موبائیل سروس معطل رکھی۔ کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں ایوب لون کو زبردست خراج عقیدت پیش کیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں نوجوانوں کے قتل کے واقعات میں اضافہ تشویشناک ہے ۔ دریں اثناء بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران آج ضلع بانڈی پورہ کے علاقے گریز میں دو اور کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا۔ ان نوجوانوں کو تلاشی اور محاصرے کی کارروائی کے دوران شہید کیاگیا۔ دختران ملت کی جنرل سیکریٹری ناہیدہ نسرین نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہاہے کہ پارٹی کی سربراہ آسیہ اندرابی کوحال ہی میں دمے کا شدید دورہ پڑا ہے تاہم جیل انتظامیہ انہیں علاج معالجے کی مناسب سہولت فراہم نہیں کررہی ہے۔ کل جماعتی حریت کانفرنس نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں گزشتہ روزسرینگر،ہندواڑہ اور بارہمولہ میں حریت رہنماء محمد شفیع ریشی ،تاجروں اورشہریوں کی رہائش گاہوں پر بھارتی تحقیقاتی ادارے این آئی اے کے چھاپوں کی شدید مذمت کی ہے

مزید : قومی