بین سٹوکس بے قصور قرار، بھارت کیخلاف سکواڈ میں طلب

بین سٹوکس بے قصور قرار، بھارت کیخلاف سکواڈ میں طلب

لندن(اے پی پی) انگلش آل راؤنڈر بین سٹوکس کو برسٹول نائٹ کلب جھگڑا کیس میں کلین چٹ مل گئی، جیوری کی طرف سے بے قصور قرار دیئے جانے کے فوراً بعد انگلینڈ نے انہیں بھارت کے خلاف شیڈول تیسرے ٹیسٹ کیلئے ٹیم میں طلب کر لیا، وہ ٹرائل کی وجہ سے دوسرا ٹیسٹ نہیں کھیل سکے تھے۔ انگلینڈ اور بھارت کے درمیان تیسرا ٹیسٹ (کل) ہفتہ سے شروع ہو گا اور میزبان ٹیم کو پانچ میچوں کی سیریز میں 2-0 کی برتری حاصل ہے۔ تفصیلات کے مطابق سٹوکس گذشتہ سال ستمبر میں برسٹول نائٹ کلب کے باہر جھگڑے میں ملوث پائے گئے تھے، کراؤن پراسیکیوشن نے ان پر لڑائی جھگڑے کا چارج عائد کیا تھا۔ گذشتہ ہفتے برسٹول کراؤن کورٹ میں سٹوکس کا ٹرائل شروع ہوا تھا، اس دوران آل راؤنڈر پر غلط بیانی کا الزام بھی لگایا گیا لیکن اس کے باوجود سات دن تک جاری رہنے والے ٹرائل کے بعد جیوری نے سٹوکس اور جھگڑے میں ملوث دوسرے شخص ریان ایلی کو بے قصور قرار دے دیا۔ الزامات سے بری الذمہ قرار دیئے جانے کے فوراً بعد انگلینڈ نے آل راؤنڈر کو بھارت کے خلاف تیسرے ٹیسٹ کیلئے سکواڈ میں شامل کر لیا۔ عدالت سے کلین چٹ ملنے کے بعد سٹوکس کو اب انگلینڈ اینڈ ویلز کرکٹ بورڈ کی ڈسپلنری کا سامنا کرنا پڑے گا۔ واضح رہے کہ سٹوکس نے پہلے ٹیسٹ میں عمدہ باؤلنگ کا مظاہرہ کر کے ٹیم کی جیت میں اہم کردار ادا کیا تھا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی