خواجہ آصف ، کیپٹن (ر) صفدر ، بابر غوری علیم خان سمیت دیگر کیخلاف انکوائریوں کی منظوری، چودھری شجاعت نیب میں پیش ، پرویزالہیٰ کی معذرت

خواجہ آصف ، کیپٹن (ر) صفدر ، بابر غوری علیم خان سمیت دیگر کیخلاف انکوائریوں کی ...

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں) قومی احتساب بیورو(نیب)نے سابق وزیرخارجہ خواجہ آصف ،کیپٹن (ر ) صفدر،پی ٹی آئی رہنما عبدالعلم خان اورسابق وفاقی وزیربابرغوری سمیت دیگر کیخلاف انکوائریوں کی منظوری دیدی، خواجہ آصف پر منی لا نڈ ر نگ سے قومی خزانے کو3668.671ملین ،کیپٹن(ر)محمد صفدر پراین اے121میں پی ڈبلیوڈی کو9ارب جاری من پسند ٹھیکیدار و ں کو ٹینڈر دینے جبکہ بابرغوری پر غیرقانونی بھرتیاں کرکے2ارب 85 کروڑ روپے کا قومی خزانہ کو نقصان پہنچا نے کے الزامات ہیں ۔ چیئر مین نیب جسٹس(ر)جاوید اقبال نے کہا ہے نیب کرپشن فری پاکستان کیلئے بھرپور کاوشیں کر رہا ہے ،بدعنوان عناصر سے رقوم نکال کرکے قومی خز ا نہ میں جمع کرائیں گے جس سے ملک کو ترقی و خوشحالی کی راہ پر گامزن ہوگی ،نیب ملک سے بدعنوانی کے خاتمے کیلئے احتساب سب کیلئے‘‘ کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہے۔ تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس جاوید اقبال کی زیر صدارت نیب ہیڈ کوارٹرز اسلام آباد میں منعقد ہوا۔اجلاس میں کئی اہم فیصلے کئے گئے جن کے مطابق نیب اس بات کو وا ضح کرنا چاہتا ہے کہ تمام شکایات کی جانچ پڑتال،انکوائریاں اور انوسٹی گیشن مبینہ الزامات کی بنیاد پر شروع کی گئی ہیں جو حتمی نہیں۔نیب تمام متعلقہ افراد سے بھی قانون کے مطابق ان کا موقف معلوم کرے گا تاکہ قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔نیب کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس نے سکندر عزیز اور دیگر کیخلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دی۔ملزمان پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے غیر قانونی طور پر کنٹونمنٹ بورڈ پشاور بورڈ کی زمین پر جعلی کاغذات کی بنیاد پر قبضہ کرنے کا الزام ہے۔جس سے قومی خزانے کو بھاری نقصان پہنچا۔اجلاس نے صوبائی ورکس ویلفیئر بورڈ پنجاب،سندھ اور بلوچستان ،نیشنل ہائی وے اتھارٹی ،میسرز ساحل پرائیویٹ لمیٹڈ کی انتظامیہ اور ریونیو افسران واہلکاران کیخلاف انکوائریوں کی منظوری دی۔سابق وفاقی وزیر برائے ریلوے ،صوبائی وزیر آبپاشی سندھ ظفر علی لغاری اور دیگر ، سپیشل اسسٹنٹ برائے وزیراعلیٰ سندھ بھلاج مل ، سابق ممبر قومی اسمبلی،ملیر کراچی عبدالحکیم بلوچ ، ڈسٹرکٹ ناظم پشاور اور دیگر، ا مجد جد علی خان سابق چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا،افسران واہلکاران سی اینڈ ڈبلیو ڈیپارٹمنٹ،افسران واہلکاران محکمہ آبپاشی اور دیگر، صوبائی ممبر بلوچستان اسمبلی انیتاعرفان بشیر اور دیگر ،سابق ممبر قومی اسمبلی رمیش لال اور دیگر، سابق ممبر صوبائی اسمبلی سندھ قمبر شہداد کوٹ سردار غیبی خان چانڈیو اور دیگر ،سابق ممبر صوبائی احمد حسین ڈاہر اور دیگر ، سابق ممبر صوبائی اسمبلی ممبر قومی اسمبلی برائے منصب، تحصیلدار مظفر گڑھ رائے عنا یت اور دیگر ،سابق ممبر صوبائی اسمبلی سہیل ظفر، سابق ٹاؤن ناظم گجرانوالا رضوان ظفر اور دیگر کیخلاف اختیارات کا ناجائز استعمال،آمدن سے زائد اثاثے بنانے ، قومی خزانے کو کڑوروں روپے کا نقصان پہنچانے سمیت دیگر الزامات میں تحقیقات کی منظوری دی گئی ۔ ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے عبدالعلیم خان اور دیگر کیخلاف انکوائری کی منظوری دی ان پر مبینہ طور پر رقوم کی منتقلی کا الزام ہے، ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے نثار احمد افضل، صغیر احمد افضل اور دیگر، نیشنل ٹیسٹنگ سروس کے ہارون الرشید، وحید اللہ ناگرہ، محمد جاوید ساقب ریجنل ہیڈ، محب الرحمان ریجنل ہیڈ اور پنجاب پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر ڈیپارٹمنٹ پنجاب اور دیگرجبکہ طاہر محمود خاکوانی پرائیویٹ شخص کیخلاف بدعنوانی اور عوام کو دھوکہ دہی کے الزام میں انوسٹی گیشن کی منظوری دی، ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے سابق وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر مجاہد کامران اور دیگرکیخلاف بھی اختیارات کا ناجائز استعمال ، غیر قانونی بھرتیاں کرنے کا الزام میں تحقیقات کی منظور دی،اس موقع پر چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال کا خطاب میں کہنا تھا نیب بدعنوانی کے خاتمہ کو نہ صرف اپنی قومی ذمہ داری سمجھتا ہے بلکہ نیب افسران اپنی بہترین صلاحیتوں کا استعمال کرتے ہوئے کرپشن فری پاکستان کیلئے بھرپور کاوشیں کر رہے ہیں۔

نیب منظوریاں

لاہور (خبر نگار، نیوز ایجنسیاں)پاکستان مسلم لیگ (ق) کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین گزشتہ روز نیب لاہور میں پیش ہو گئے جہاں انہو ں نے نیب لاہور کے مختلف سوالوں کے جوابات دیئے جس کے بعد چوہدری شجاعت حسین واپس روانہ ہو گئے نیب لاہور نے مقامی انکوا ئری میں چوہدری شجاعت حسین اور پی ایم ایل ق پنجاب کے رہنما چوہدری پرویز الٰہی کو طلب کر رکھا تھا لیکن چوہدری پرویز الٰہی نے سپیکر پنجا ب اسمبلی کے الیکشن میں مصروفیت کے باعث نیب لاہور سے معذرت کر لی تھی۔ادھر95ملین ڈالر کی منی لانڈرنگ کیس میں معروف بزنس مین میاں منشا آج نیب کے طلب کرنے پر پیش ہونگے۔ تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو نے 95 ملین ڈالر منی لانڈرنگ کی تحقیقات کیلئے میاں منشا کو 17 اگست کو طلب کیاہے، جہاں نیب کی 3 رکنی ٹیم میاں منشا سے منی لانڈرنگ کی تحقیقات کرے گی۔نیب ذرائع کے مطابق میاں منشا کیخلاف پاکستان ورکر پارٹی کے فاروق سہلریا نے درخواست دی تھی، احتساب بیورو فاروق سہلریا کو الیکشن سے قبل طلب کرکے بیان ریکارڈ کرچکا ہے۔میاں منشا نے 95 ملین ڈالر منی لانڈرنگ کے ذریعے برطانیہ منتقل کیے، ایم سی بی بینک، نشاط گروپ، ڈی جی خان سیمنٹ میاں منشا کی ملکیت ہیں جبکہ آدم جی انشورنس اور نشاط پاورکمپنیاں بھی میاں منشا کی ملکیت ہیں۔

چودھری شجاعب پیش

مزید : صفحہ اول