مٹہ میں طویل ترین بجلی بندش کیخلاف عوام کا صبر کا پیمانہ لبریز

مٹہ میں طویل ترین بجلی بندش کیخلاف عوام کا صبر کا پیمانہ لبریز

مٹہ ( نمائندہ پاکستان) مٹہ میں بجلی کی مسلسل غیرقانونی طویل ترین بجلی کی بندش کی خلاف عوام کی صبر کا پیمانہ لبریز مٹہ میں بھر پور احتجاج کرنے کا اعلان جب تک بجلی کی بحالی معمول کے مطابق نہیں ہوتی واپڈا والوں کی خلاف احتجاج کرینگے واپدا والوں نے مٹہ بازار اور قریبی علاقوں کیساتھ جو زیادتی شروع کی ہے اسکی مثال تاریخ میں نہیں ملتی جاری ظلم مذید برداشت کی نہیں جو کچھ بھی ہوتے ہیں کوئی پرواہ نہیں نارواء لوڈشڈنگ سے اتنی تنگ اچکے ہیں کہ اب گھروں سے خواتین بھی احتجاج کرنے کیلئے تیار ہوچکی ہے جو شرم کی بات ہیں مٹہ میں گرینڈ جرگہ سے مقررین کا خطاب کسی بھی قسم کی ٹیکس ماننے کو تیار نہیں ملاکنڈ ڈویژن کی خصوصی حثیت کو برقرار رکھنے کیلئے تن من دھن کی قربانی دینے سے دریغ نہیں کرینگے منتخب وفد نے اسسٹنٹ کمشنر مٹہ سے ملاقات کیلئے انکے دفتر پہنچ گئے لیکن اسسٹنٹ کمشنر مٹہ موجود نہ ہونے کی وجہ سے ملاقات نہ ہوسکی تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز مٹہ بازار اور قریبی علاقوں میں بجلی کی ناروا بندش کی خلاف ایک گرینڈ جرگہ مٹہ میں منعقد ہوا جس میں تاجر برادری کیساتھ ساتھ عام لوگوں منتخب نمائندوں اور میڈیا کے ساتھیوں نے بھی شرکت کی گرینڈ جرگہ میں مٹہ بازار اور قریبی علاقوں میں تاریخ کی بدترین بجلی بندش اور لوگوں کی درپیش مشکلات پر تفصیل سے بات چیت ہوئی گرینڈ جرگہ سے اتفاق ایسوسی ایشن مٹہ بازار کے تاحیات چیف ارگنائزر قاسیم کاکا مٹہ بازار کے صد ر محمو زوبیر سابق صدور حاجی عبدالقیوم اکبر باچا جمشید خان جہانزیب نورالہادی خائستہ باچا محمد اسرار خان اور دیگر نے خطاب کی جبکہ اس موقع پر نائب ناظم محمد صادق مٹہ بازار کے جنرل سیکرٹری عثمان غنی عظمت علی خان رحیم خان نوید اختر اور دیگر بھی موجود تھے مقررین نے مٹہ بازار سمیت قریبی علاقوں میں بجلی کی ناروا بندش اور بجلی اور ٹیلفون بلوں میں نئے بڑے پیمانے پر لگنے والی ٹیکس پر بحث کی گئی اور مطالبہ کیا گیا کہ مٹہ میں بجلی کی تاریخ کی بدترین بند ش کو فوری طور پر ختم کرکے ملاکنڈ دویژن کی قانونی حیثیت کو برقرار رکھ کر ٹیکس نہ لگانے سے گریز کیا جائے مقررین نے کہا کہ اگر ملاکنڈ ڈویژن میں ٹیکس لگانے کی کوشش کی گئی تو یہاں کی عوام ٹیکس کی خلاف بھرپور مذاحمت کرینگے اور کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے انہوں نے کہا کہ مٹہ میں مذید بجلی کی ناروا سلوک کو فوری طور پر ختم کیا جائے ورنہ اس صورتحال کی خلاف ایک احتجاجی تحریک شروع کی جایئگی دریں اثناء اس موقع پر ایک منتخب کمیٹی نے تاحیات چیف ارگنائزر قاسیم کاکا کے زیر صدارت اسسٹنٹ کمشنر مٹہ سے ملنے کیلئے اور صورتحال سے گاہ کرنے کیلئے انکے دفتر گئے لیکن اسسٹنٹ کمشنر مٹہ کسی سرکاری کام کی وجہ سے دفتر میں نہ ہونے کی وجہ سے ملاقات نہ ہوسکیں

مزید : پشاورصفحہ آخر