بھارت ظلم و جبر سے زیادہ دیر تک مقبوضہ کشمیر پر اپنا قبضہ برقرار نہیں رکھ سکتا: عثمان بزدار

  بھارت ظلم و جبر سے زیادہ دیر تک مقبوضہ کشمیر پر اپنا قبضہ برقرار نہیں رکھ ...

  

لاہور (نمائندہ خصوصی)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہا ہے کہ پاکستان کشمیر کے بغیر نا مکمل ہے، بھارت ظلم و جبر سے زیادہ دیر تک مقبوضہ کشمیر پر اپنا قبضہ برقرار نہیں رکھ سکتا،کڑے وقت میں اوربحران کی کیفیت میں پاکستان اور پاکستانی قوم پوری قوت کے ساتھ کشمیریوں کے ساتھ کھڑی ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحریک انصاف پنجاب کے صدر اعجازچودھری سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ملاقات میں تحریک آزادی کشمیر، سیاسی صورتحال اور پارٹی کے تنظیمی امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے لائن آف کنٹرول پربھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ، مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو اورکشمیری عوام پربھارتی ظلم و ستم کی شدید مذمت کی۔ یوم سیاہ پرکامیاب ریلی پر عوام سے اظہار تشکرکیااورفیصلہ کیاگیا کہ پنجاب کے دیگر ڈویژنل ہیڈ کوارٹر میں بھی کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے ریلیوں کے انعقاد کیا جائے گا۔بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کر کے آمرانہ اقدام کیا ہے اورمودی سرکارکے ظلم کی شب ختم ہونے کے قریب ہے۔ کشمیر کی آزادی کا دن اب زیادہ دور نہیں۔بھارت کوہرسطح پر رسوائی کا سامنا ہوگا۔وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارنے عیدالاضحی، یوم آزادی اور یوم سیاہ کی ریلیوں کی بہترین سکیورٹی اور شاندار انتظامات پر پولیس اور انتظامیہ کو شاباش دیتے ہوئے کہا ہے کہ پولیس اور انتظامیہ کے افسران و اہلکاروں نے لگن اور عزم کے ساتھ فرائض سرانجام دیئے، جس پر میں پولیس اور انتظامیہ کے افسروں و اہلکاروں کو شبانہ روز محنت پر مبارکباد دیتا ہوں۔ پنجاب میں پولیس اور انتظامیہ نے ایک ٹیم ورک کے طور پر کام کیا اور امید ہے کہ مستقبل میں بھی پولیس اور انتظامیہ کو اسی جذبے اور عزم کے ساتھ فرائض سرانجام دے گی۔ علاوہ ازیں وزیراعلیٰ پنجاب نے یوم سیاہ کی ریلی میں بھرپور شرکت پر اقلیتی برادریوں اور شہریوں سے اظہار تشکر کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ رنگ و نسل سے بالاتر ہو کر پاکستانی شہریوں نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلاف یوم سیاہ کی ریلی میں بھرپور شرکت کی جس پر میں اقلیتی برادریوں خصوصاً ہندو، سکھ اور مسیحی افراد کا شکریہ ادا کرتے ہوئے انہیں خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔

سردار عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -