کنٹرول لائن، بھارتی فائرنگ سے ایک اور جوان شہید، ایک شہری زخمی، ڈپٹی ہائی کمشنر طلب، احتجاج 

کنٹرول لائن، بھارتی فائرنگ سے ایک اور جوان شہید، ایک شہری زخمی، ڈپٹی ہائی ...

  

راولپنڈی،اسلام آباد،چناری(مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں)بھارت کی کنٹرول لائن پر بلااشتعال فائرنگ سے پاک فوج کا ایک اور جوان شہید ہوگیاجس کے بعد شہدا کی تعداد 4ہوگئی۔گزشتہ روز بھارتی یوم آزادی کو پوری دنیا نے یوم سیاہ کے طور پر منایا جو بھارت سے برداشت نہ ہوسکا، اس کے نتیجے میں ایل او سی پر بھارتی جارحیت جاری رہی اور پاک فوج کا ایک اور جوان شہید کردیا۔ آئی ایس پی آرکے مطابق بھارت نے بٹل سیکٹر پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں قوم کے ایک اور بیٹے سپاہی محمد شیراز نے شہادت کا رتبہ پایا۔دوسری طرف بھارتی فوج نے جمعہ کی صبح سات بجے سے دن گیارہ بجے تک وادی لیپاء کے دیہاتوں بٹلیاں،نوکوٹ،قیصر کوٹ،لب گراں،سعد پورہ اور موجی پر چھوٹے بڑے ہتھیاروں سے فائرنگ اور گولہ باری کی جس کے نتیجہ میں داؤد ولد زاہداللہ زخمی ہو گیا اور انھیں مقامی ہسپتال منتقل کر دیا گیا بھارتی گولہ باری سے ظہور ولد عبداللہ،نصیر ولد ولی محمد،عبدالرحمن ولد نعمت اللہ،مظہر ولد عبدالرحمن،صغیر ولد نور دین،منظورولد نور دین،اشرف ولد ولی محمد ساکنان لب گراں،شبیر احمد ولد فقیر محمد،ستار محمد ولد حبیب اللہ،طفیل احمد ولد شبیر احمد،عارف ولد نذیرساکنان موجی کے رہائشی مکان جزوی طور پر تباہ ہو گئے پاک فوج نے دشمن کی بلااشتعال گولہ باری کا موثر جواب دیتے ہوئے بھارتی گنوں کو خاموش کروا دیا جس کے بعد سول آبادی نے سکھ کا سانس لیا۔علاوہ ازیں پاکستان نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکو دفترخارجہ طلب کرکے بھارتی فوج کی جانب سے ایل او سی پر سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی  اوربھارتی فوج کی فائرنگ سے پاک فوج کے جوانوں کی شہادت پر شدید احتجاج کیا ہے۔جمعہ کو ڈی جی ساؤتھ ایشیا ڈاکٹر محمد فیصل نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر گوروا بلو والیاکو دفترخارجہ طلب کرکے پاکستان کی جانب سے مراسلہ دیا گیا ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ بھارتی افواج لائن آف کنٹرول پر شہری آبادی کو نشانہ بنا رہی ہیجوقابل مذمت ہے۔ڈاکٹر فیصل نے بھارت کی جانب سے جنگ بندی معاہدے کی خلا ف ورزیوں کے حوالے سے یہ بات بھی ظاہر کی کہ جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی خطے میں امن اور سیکورٹی کیلئے خطرہ ہے۔بھارت کی جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی اسٹریٹجک غلطی کا باعث بن سکتی ہے۔وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین خان گنڈاپور نے  ایل او سی پر بھارتی جارحیت کی شدید  مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پوری قوم اپنے جوانوں کی لازوال قربانیوں کو ہمیشہ یاد رکھے گی،بھارتی جارحیت ہمیں کشمیریوں کی حمایت سے دستبردار نہیں کروا سکتی،مودی نے بھارت کی جڑوں کو کھوکھلا کرنے کی بنیاد رکھ دی ہے،مسئلہ کشمیر پر اپنے اصولی موقف سے ایک انچ پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

کنٹرول لائن فائرنگ 

مزید :

صفحہ اول -