ایڈوکیٹ یافث نوید ہاشمی کی بازیابی کیلئے گھنٹہ گھر چوک پر احتجاجی دھرنا 

ایڈوکیٹ یافث نوید ہاشمی کی بازیابی کیلئے گھنٹہ گھر چوک پر احتجاجی دھرنا 

ملتان (سٹی رپورٹر)معروف قانون دان اور سابق نائب صدر ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن ملتان یافث نوید ہاشمی اور دیگر لاپتہ افراد کی بازیابی کے لیے گھنٹہ گھر چوک ملتان میں احتجاجی دھرنا دیا گیا، احتجاجی دھرنے میں خواتین، بچوں اور مردوں کی بری تعداد نے شرکت کی، دھرنے کی قیادت مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل سید ناصر عباس شیرازی، امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان(بقیہ نمبر46صفحہ7پر)

 کے مرکزی صدر محمد قاسم شمسی، علامہ اقتدار حسین نقوی،علامہ قاضی نادر حسین علوی، شیعہ علمائے کونسل ملتان کے صدر علامہ سید کاشف ظہور نقوی اور قارب نوید ہاشمی نے کی، دھرنے کے شرکاء نے ملک بھر میں لاپتہ افراد کی بازیابی کا مطالبہ کرتے ہوئے شدید نعرے بازی کی دھرنے کے شرکاء نے چوک گھنٹہ میں نماز مغرب ادا کی، اس موقع پر ٹریفک کیلئے راستہ کھلا رہا اور پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات تھی، دھرنے سے مرکزی خطاب کرتے ہوئے سید ناصر عباس شیرازی کا کہنا تھا کہ آج ہمیں پاکستان میں عالمی آقاؤں کے اشاروں پر تختہ مشق بنایا جا رہا ہے، اس ملک اور قوم کا مجرم یافث نوید ہاشمی نہیں بلکہ وہ ہیں جنہوں نے اسے جبری گمشدہ کیا ہے، انہوں نے اس ملک کے آئین اور قانون کو توڑا ہے، یہ ملک کا محب وطن بیٹا ہے، یہ ہر ظلم کے خلاف ہر میدان میں کھڑا رہا ہے، دشمن نے ایک بار پھر غلطی کی ہے اور ہمیں بیداری کا موقع دیا ہے، آج صرف ملتان میں نہیں بلکہ ملک کے طول و عرض میں احتجاج کئے جا رہے ہیں، ہم یافث نوید ہاشمی کو کسی مسلک کا ایشو نہیں بننے دیں گے، یہ اس ملک اور آئین کا مسئلہ ہے، ہم خاموش بیٹھنے والے نہیں ہیں، جب تک یافث نوید ہاشمی کی رہائی نہیں ہوتی، ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے۔ ہم یافث نوید ہاشمی سمیت تمام مسنگ پرسن کی رہائی کا مطالبہ کرتے ہیں۔ احتجاجی دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے آئی ایس اوپاکستان کے مرکزی صدر محمد قاسم شمسی کا کہنا تھا کہ ملک میں ایک طرف کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا جارہا ہے دوسری جانب پاکستان میں کشمیر بنا یا جارہا ہے، لوگوں کو جبری گمشدہ کیا جارہا ہے، ریاست ہمارے ساتھ کشمیریوں والا سلوک نہ کرے، ہمیں مجبور نہ کیا جائے کہ ہم محرم الحرام کے جلوسوں کو دھرنوں میں تبدیل کردیں، اْنہوں نے کہا کہ آج ملک بھر میں یافث نوید ہاشمی کی بازیابی کے لیے دھرنے دیے گئے اور احتجاج کیے گئے، اگر اگلے جمعہ تک ہمارے جبری گمشدگان کو بازیاب نہ کرایا گیا تو اگلے مرحلے کا اعلان کریں گے، ہم ملک بھر میں موجود وزراء، اراکین اسمبلی، وزیراعلیٰ ہاؤسز اور گورنر ہاؤسز کا گھیراؤ کریں گے۔ہماری حب الوطنی کا مزید امتحان نہ لیاجائے، تمام شیعہ مسنگ پرسنز کو فی الفور بازیاب کرایا جائے، مقتول بھی ہم،اسیر بھی ہم، مظلوم بھی ہم، جب تک یافث نوید ہاشمی کو رہا نہیں کیا جائے گا ہمارا احتجاج جاری رہے گا، یہ مطالبہ کسی ایک جماعت کا نہیں بلکہ پوری قوم کا ہے، احتجاجی دھرنے میں انجمن ندائے حسینی کے صدر سید قمر عباس زیدی، سید طاہر عباس نقوی، شعیب نقوی،سہیل عابدی،سلیم عباس صدیقی، مرزا وجاہت علی، آئی ایس او ملتان کے صدر عاطف حسین، مہر سخاوت علی، جواد رضاجعفری،ڈاکٹر موسیٰ کاظم، ڈاکٹر عاصم حسین، صفدر حسین بخاری اوردیگر بھی موجود تھے۔

دھرنا 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...