2خواتین قتل، حادثات میں بچے سمیت 7افراد جاں بحق دو لاشیں بر آمد 

2خواتین قتل، حادثات میں بچے سمیت 7افراد جاں بحق دو لاشیں بر آمد 

  

ملتان ‘ وہاڑی ‘ لڈن ‘ خانیوال ‘ محسن وال ‘ چوک مکول ‘ رحیم یار خان ‘ وقائع نگار ‘ نمائندگان پاکستان ) 2خواتین قتل ‘ حادثات میں بچے سمیت 7افراد جاں بحق دو لاشیں برآمد ۔ملتان سے وقائع نگار کے مطابق ملتان کے علاقے سیتل ماڑی نو بہار نہر سے ایک بچے اور مرد کی لاشیں ملی ہیں۔ جن کی شناخت نہیں ہو سکی ہے۔ پولیس کے مطابق بچے کی عمر 16 سال اور دوسرے نوجوان کی 24 سال بتائی جارہی ہے(بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

۔پولیس نے دونوں لاشوں کو نشتر اسپتال سرد خانے منتقل کردیا ہے۔جبکہ دوسری جانب متعلقہ پولیس نے واقعہ کی تحقیقات شروع کردی ہے۔وہاڑی ، لڈن سے سٹی رپورٹر ، نامہ نگار کے مطابق لڈن کے نواحی علاقہ بستی غریب آباد کی رہائشی ایک اور ہوا کی بیٹی قتل مبینہ طور کم عمری کی شادی قتل کی وجہ بنی ہے واقعات کے مطابق گزشتہ روزلڈن کے نواحی علاقہ کے رہائشی محمد یار کی اٹھارہ سالہ بیٹی نادیہ کی شادی پانچ سال قبل بشیر نامی شخص سے ہوئی تھی۔ بشیر کو شک تھاکہ اسکی بیوی کے مبینہ طور پر غیر مرد کے ساتھ ناجائز تعلقات ہیں۔جس پرناجائز تعلقات کے شبہ میں شوہر بشیر نے مبینہ طور پرگلادبا کر قتل کردیا اور نعش قریبی کماد کی فصل میں پھینک دی ہے۔کھیتوں سے چارہ کاٹنے والے افراد نے کماد میں پڑی نعش دیکھی تو شور مچایا جس پر اہل علاقہ اکھٹے ہوگئے جنہوں نے 15اور تھانہ لڈن پولیس کو متعدد کالز کیں لیکن پولیس کئی گھنٹوں بعد بھی موقع پر نہ پہنچ سکی اور اسی اثناءمیں ملزم موقع سے فرار ہوگیا اور کئی گھنٹوں بعد بھی نعش کماد کی فصل میں ہی پڑی ہے۔ یاد رہے مقتولہ کی عمر اب اٹھارہ سال ہے اور پانچ سال قبل جب شادی ہوئی تھی تب عمر مبینہ طور پر صرف تیرہ سال تھی اور اس قتل کی وجہ کم عمری کی شادی بھی ہے۔خانیوال ، محسن والا سے نمائندہ پاکستان ، نامہ نگار کے مطابق تھانہ تلمبہ کی حدود گاﺅں حید رآباد میں نامعلوم کی فائرنگ سے گھر میں سوئی ہوئی 25سالہ لڑکی قتل،تفصیلات کے مطابق میاں چنوں تھانہ تلمبہ پولیس کی حدود گاﺅںموضع حیدر آباد میں نامعلوم کی فائرنگ سے رات گھر میں سوئی ہوئی 25سالہ مسرت بی بی جاں بحق ہوگئی،پولیس نے نعش کو پوسٹمارٹم کیلئے ہسپتال منتقل کردیا،پولیس کے مطابق مزید کاروائی مدعیوں کی درخواست کے بعد کی جائے گی تحقیقات جاری ہے۔. چوک مکول سے نامہ نگار کے مطابق شاہ جمال میں کار کو حادثہ میرہزار خان کا رہاشی کار ڈرائیوار ایک شخص جابحق دو زخمی زخمیوں کو ڈسڑکٹ ہسپتال مظفرگڑھ میں داخل کرادیا گیا تفصیلات کے مطابق میرہزار خان کے رہاشی غلام یسین راں دودھ والا شاہ جمال کے قریب ایکسیڈنت میں جابحق اور جنرل کونسلر ملک فیض رسول ببر اور رانا عبدالحمید بورانا شدید زخمی ھو گئے جن کو ڈسڑکٹ ہسپتال مظفرگڑھ میں داخل کرادیا گیا ۔ رحیم یار خان سے بیورو رپورٹ کے مطابق شاہ جمال میں کار کو حادثہ میرہزار خان کا رہاشی کار ڈرائیوار ایک شخص جابحق دو زخمی زخمیوں کو ڈسڑکٹ ہسپتال مظفرگڑھ میں داخل کرادیا گیا تفصیلات کے مطابق میرہزار خان کے رہاشی غلام یسین راں دودھ والا شاہ جمال کے قریب ایکسیڈنت میں جابحق اور جنرل کونسلر ملک فیض رسول ببر اور رانا عبدالحمید بورانا شدید زخمی ھو گئے جن کو ڈسڑکٹ ہسپتال مظفرگڑھ میں داخل کرادیا گیا آم کے باغ مےں کام کرنے کے دوران 25سالہ شخص کو زہریلے سانپ نے ڈس لیا‘ہسپتال مےں دم توڑگیا دو خواتین زیرعلاج۔ تفصیل کے مطابق علی پور کارہائشی25سالہ محمدعمران جوکہ آم کے باغ مےں کام کررہاتھا کہ اچانک زہریلے سانپ نے ڈس لیا‘ ساتھیوں نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں طبی امداد کے باوجود محمدعمران زہرپھیل جانے کے باعث جانبرنہ ہوپایااور دم توڑگیا جبکہ لیاقت پور کی رہائشی 60سالہ رانی مائی اور پلوشاہ کی رہائشی30سالہ ثمینہ بی بی کو ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ جبکہ ٹریفک حادثات مےں شدید زخمی ہونے والے 3افراد جاں بحق‘ 41 زیرعلاج۔ تفصیل کے مطابق ٹریفک کا پہلا حادثہ چوک شہباز پور کے رہائشی 60سالہ محمد بخش کے ساتھ پیش آیا جو اپنی موٹر سائیکل پرسوار ہوکر قومی شاہراہ پر جارہاتھاکہ پیچھے سے آنیوالی مسافروین نے ٹکر ماردی جس کے نتیجہ مےں وہ شدید زخمی ہوگیا‘ دوسراحادثہ اقبال آباد قومی شاہراہ پر 50سالہ نامعلوم خاتون کے ساتھ پیش آیا جسے سڑک کراس کرنے کے دوران تیز رفتار کار نے ٹکر ماردی جس کے نتیجہ مےں وہ موقع پر ہی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑگئی جبکہ تیسراحادثہ جیٹھ بھٹہ کے قریب 50سالہ نامعلوم شخص کے ساتھ پیش آیا جس سے نامعلوم گاڑی نے ٹکر مارکرشدید زخمی کردیا‘ ریسکیو اہلکاروں نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں طبی امداد کے باوجود محمد بخش اور نامعلوم شخص جانبرنہ ہوپائے اور دم توڑگئے ‘ہسپتال انتظامیہ نے نامعلوم اشخاص کی لاشیں شناخت کیلئے سرد خانے منتقل کردیں‘ جبکہ مختلف حادثات مےں شدید زخمی ہونے والے 41افراد جن مےں خیرپورکھڈالی کی رہائشی7سالہ سویرا بی بی‘ فیروزہ کا4سالہ محمدہاشم‘ چک70این پی کی8سالہ زہرا بی بی‘ جمالدین والی کی40سالہ ساجدہ بی بی‘ عیدگاہ روڈ کی26سالہ عائشہ بی بی‘ بنگلہ منٹھار کا13سالہ رازی خان‘ صادق آباد کا30سالہ علی احمد‘ کوٹ سمابہ کا65سالہ محمد شاہد‘ ترنڈہ سوائے خان کا26سالہ محمدہاشم‘ صادق آباد کا55سالہ نذیراحمد‘ لیاقت پورکا18سالہ محمد محمود‘ راجن پور کا30سالہ عبدالرزاق‘وائرلیس پل کا40سالہ محمد محسن اور اڈا خانپورکارہائشی22سالہ محمد سہیل وغیرہ شامل ہےں۔ ان افراد کو ہسپتال مےں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔خانیوال سے نمائندہ پاکستان ، نامہ نگار کے مطابق سےنئر صحافی راﺅ خالد محمود کا جواں سالہ بھتیجا اور راﺅ محمود کا 18سالہ بےٹا احمد محمود جو فرسٹ اےئر کا طالب علم تھا ۔عےد سے اےک روز قبل اپنی موٹر سائےکل پر بچو ںکو مدرسے چھو ڑ کر واپس آ رہا تھا کہ اعوان چوک کے قرےب اچانک اےک سائےکل سوار نے بغےر اشارہ دےے سائےکل موڑ دی جس سے احمد محمود کا موٹر سائےکل بے قابو ہو کہ الٹ گےا اور اسے سر مےں شدےد چو ٹےں آئےں ۔ورثا کے مطا بق رےسکےو1122کو کال کی گئی مگر رےسکےو ٹےم کال سے20منٹ بعد جائے وقو عہ پر پہنچی احمد محمود کو شدےد ذکمی حالت مےں پہلے ڈسی اےچ کےو بعد ازاں نشتر ہسپتال ملتان منتقل کےا جہا ں وہ دو روز تک قومہ مےں رہنے کے بعد خالق حقےقی سے جا ملا۔مرحوم کی نماز جنازہ ان کے آ بائی گاﺅ ں مےں ادا کر دی گئی جسمےں سےا سی ،سما جی شخصےا ت ،معززےن علاقہ اور صحافےو ں کی بڑی تعداد نے شرکت کی ۔مر حوم کو آ بائی گاﺅ ں مےں سپرد خاک کر دےا گےا۔۔ رحیم یار خان سے بیورو رپورٹ کے مطابق گھریلوجھگڑوں اور مالی پریشانیوں سے دلبرداشتہ ہوکر4خواتین سمیت11افراد کااقدام خودکشی‘ طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل‘ تفصیل کے مطابق روجھان کی رہائشی18سالہ نسیم بی بی‘ چک عباس کی40سالہ ہدایت بی بی‘تھلی چوک کی18سالہ آمنہ بی بی‘ گلشن اقبال کی18سالہ دعا فاطمہ‘ چوک بہادر پورکا40سالہ مرزاخان‘ بنگلہ منٹھار کا13سالہ محمد وقاص‘ جمالدین والی کا40سالہ عبدالمالک‘ چک38کا20سالہ حق علی‘ چک112کا22سالہ نورحسن‘ سنی پل کا25سالہ محمد عرفان اور تھلی چوک کارہائشی13سالہ ضیاءالرحمن نے آئے روز کے گھریلوجھگڑوں اورمالی پریشانیوں سے دلبرداشتہ ہوکر کالاپتھر‘ گندم مےں رکھنے والی گولیاں اور سپرے پی لیا‘ حالت غیر ہونے پرورثاءنے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں انہیں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔۔ 

قتل حادثات 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -