قومی اسمبلی کے رکن اقبال محمد علی پی سی بی کے معاملات پر بھڑک اٹھے ، ایم ڈی وسیم خان کیلئے بھی کھری کھری سنادیں

قومی اسمبلی کے رکن اقبال محمد علی پی سی بی کے معاملات پر بھڑک اٹھے ، ایم ڈی ...
قومی اسمبلی کے رکن اقبال محمد علی پی سی بی کے معاملات پر بھڑک اٹھے ، ایم ڈی وسیم خان کیلئے بھی کھری کھری سنادیں

  


اسلام آباد (ویب ڈیسک) قومی اسمبلی کے رکن اقبال محمد علی نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے موجودہ حالات کو انتہائی بدترین قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ مجھے اس خبر پر شدید حیرانی ہوئی کہ مصباح الحق چیف سلیکٹر اور کوچ بیک وقت دونوں عہدوں پر کام کریں گے۔جیونیوز کے مطابق اقبال محمد علی کا کہنا تھا کہ یہ کیسے ہو سکتا ہے، پہلے وسیم خان کو برمنگھم سے لاکر بورڈ کے اہم فیصلوں میں عقل کُل کا درجہ دے دیا گیا، اب ٹیم کے معاملات مصباح الحق کو دینے کی بازگشت ہے۔لانڈھی (کراچی) این اے 240 سے متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان ) کے کامیاب امیدوار اقبال محمد علی کا کہنا تھا کہ پہلے محکمہ جاتی کرکٹ ختم کر کے کرکٹرز کے ڈیتھ وارنٹ جاری کئے گئے، اب چیئرمین پی سی بی احسان مانی تو ایسا محسوس ہوتا ہے کہ نیند میں ہیں، بورڈ وسیم خان چلا رہے ہیں۔اقبال محمد علی نے مینجنگ ڈائریکٹر کو مشورہ دیا کہ جہاں وہ دیگر بہت سے کام کر رہے ہیں انہیں چاہئیے کہ قومی ٹیم کے منیجر بھی بن جائیں کیوں کہ وہ 69 سال کے طلعت علی ملک سے 21 سال چھوٹے ہیں۔

مزید : کھیل


loading...