بین الافغان مذاکرات میں شامل سرکاری ٹیم کی خاتون رکن قاتلانہ حملے میں زخمی

  بین الافغان مذاکرات میں شامل سرکاری ٹیم کی خاتون رکن قاتلانہ حملے میں زخمی

  

 کابل (مانیٹرنگ ڈیسک)افغانستان کے دارالحکومت کابل میں طالبان سے مذاکرات کے لیے تشکیل دی گئی سرکاری ٹیم کی رکن اور انسانی حقوق کی رہنما فوزیہ کوفی مسلح افراد کے حملے میں زخمی ہوگئی۔خبرایجنسی اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق افغان وزارت داخلہ کے ترجمان طارق آریان کا کہنا تھا کہ 45 سالہ فوزیہ کوفی اور ان کی بہن صوبہ پروان میں ایک اجلاس کے بعد واپس آرہی تھیں کہ کابل کے قریب مسلح افراد نے انہیں نشانہ بنایا۔انہوں نے کہا کہ کوفی کے دائیں بازو میں گولی لگی ہے اوران کی حالت خطرے سے باہر ہے۔خیال رہے کہ سابق رکن پارلیمان اور طالبان کی سخت ناقد تھیں، اب وہ افغان حکومت کی مذاکراتی ٹیم میں شریک ہیں۔طالبان نے اپنے بیان میں کوفی پرحملے میں ملوث ہونے کی تردید کردی ہے۔

حملے میں زخمی

مزید :

صفحہ اول -