برصغیر میں مسلمانوں پر ڈھائے گئے ظلم ناقابل بیان ہیں،احمد حسین ڈیہڑ 

برصغیر میں مسلمانوں پر ڈھائے گئے ظلم ناقابل بیان ہیں،احمد حسین ڈیہڑ 

  

 ملتان (سپیشل رپورٹر)  محمدبن قاسم بلائنڈ ویلفیئر کمپلیکس ملتان میں شمع گھی ملز کے اشتراک سے گذشتہ روز جشن آزادی اور یکجہتی کشمیر کی تقریب منعقد ہوئی جس کے مہمانان خصوصی ممبر قومی اسمبلی احمد حسین ڈیہڑ، اے سی سٹی عابدہ فرید، ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر ملک یونس وینس، ڈی او سپیشل ایجوکیشن فخر سیال، بیورو چیف یاسر شیخ، اسد ممتاز، حسیب اقبال تھے جبکہ صدارت ڈائریکٹر ادارہ سعدیہ کرمانی نے کی۔ احمد حسن ڈیہڑ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے(بقیہ نمبر41صفحہ6پر)

 کہا آزادی کا دن ہمارے لیے بڑی اہمیت کاحامل ہے کیونکہ اسی دن ہمیں آزادی حاصل ہوئی تھی اور آج ہم اس کا جشن منا رہے ہیں۔انہوں نے کہا انگریز اور ہندو قوم سازشی قوم ہے اور انہوں نے قیام پاکستان سے پہلے مسلمانوں پر جو ظلم ڈ ھائے وہ نا قابل بیاں ہیں۔آخر کار مسلمان قائد اعظم کی قیادت میں متحدہوئے اور اس تحریک میں بچے،بوڑھے مرد خواتین اور معذور افراد نے حصہ لیا اور اپنے جان کے نذرانہ پیش کر کے پاکستان حاصل کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عابدہ فرید نے کہ آج ہم اللہ پاک کے فضل وکرم سے آزادی کی تقریبات منعقد کررہے ہیں اور یہی دعا کرتے ہیں کہ اللہ پاک کشمیر کو بھی آزادی عطا فرمائے۔ ہمارے بزرگوں نے آزادی حاصل کرنے کے لیے لازوال قربانیاں دیں۔ ملک یونس وینس نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سر سید احمد خان نے مسلمانوں کو ایک علیحدہ قوم ہونے کی حیثیت سے دوقومی نظریہ پیش کیا اس کے بعد علامہ محمد اقبال نے جوخواب دیکھا تھا قائد اعظم محمد علی جناح نے اپنی طویل کاوشوں کے بعد پاکستان حاصل کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈائریکٹر ادارہ ہذا سعدیہ کرمانی نے کہا کہ بزرگوں نے پاکستان بنانے کے لیے جو قربانیاں دی ہیں وہ ناقابل فراموش ہیں اور ہمیں اپنے پاکستان کی حفاظت کے لیے متحد ہونا چاہیے تاکہ پاکستان مزید ترقی کرسکے۔انہوں نے مزید کہا کہ آزادی کا دن ہمارے تجدید عہد کا دن ہے اورہمیں ملک کی ترقی کے لیے قائد اعظم کے فرمان کے مطابق عمل کرنا ہوگا۔ تقریب میں فخر سیال، یاسر شیخ، اسد ممتاز، حسیب اقبال، نصرت بانو، محمد نصرُاللہ نے خطاب کیا۔ تقریب میں نابینا بچوں نے ملی نغمے، ٹیبلو اور خاکے پیش کیے اورآخر میں مہمانوں نے بچوں میں انعامی شیلڈز،کیک اور مٹھائی تقسیم کی۔

احمد حسین ڈیہڑ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -