پاک بی ڈبلیو ڈی کی بہاولپور منتقلی کیخلاف عدالت میں رٹ دائر 

  پاک بی ڈبلیو ڈی کی بہاولپور منتقلی کیخلاف عدالت میں رٹ دائر 

  

 ملتان(نمائندہ خصوصی)پاک پی ڈبلیو ڈی کے دفتر کی ملتان سے بہاولپور منتقلی کیخلاف تحریک انصاف کے ایم این اے ملک احمد حسین ڈیہڑ نے عدالت عالیہ سے رجوع کر لیا۔ رٹ پٹیشن بیرسٹر ریحان جوئیہ ایڈووکیٹ نے دائر کی ہے۔ذرا?ع سے معلوم ہوا ہے کہ جمعہ (بقیہ نمبر24صفحہ6پر)

کے روز ایم این اے ملک احمد حسین ڈیہڑ نے ملتان ہا?ی کورٹ میں پاک پی ڈبلیو ڈی کے دفتر کی منتقلی کیخلاف ایک پٹیشن دا?ر کروا?ی۔رٹ میں موقف اختیار کیا گیا کہ وفاقی وزیر طارق بشیر چیمہ نے اختیارات سے تجاوز کرتے ہو? مفادعامہ کیخلاف اپنے ذاتی مقاصد کیلے 30 سال سے ملتان میں کام کرتے دفتر کو فوری طور پر بہاولپور منتقلی کا نوٹیفکیشن جاری کیا۔عدالت عالیہ کو بتایا گیا کہ پاک پی ڈبلیو ڈی کی ذاتی عمارت پاک پی ڈبلیو ڈی کمپلیکس 9 کروڑ کی خطیر رقم سے تعمیر کی گ? ہے۔ 20 اگست کو سامان ادارے کی ذاتی بلڈنگ میں منتقل کرنا تھا۔اس سے قبل وفاقی وزیر طارق بشیر چیمہ نے 18 اگست کی تاریخ کو سامان اور ریکارڈ بہاولپور منتقلی کا ٹوٹیفکیشن بھیج دیا۔اس سلسلہ میں ملک احمد حسین ڈیہڑ سے رابطہ کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ کسی کو ذاتی مقاصد کیلے دفتر منتقلی کی اجازت ہرگز نہیں دیے سکتے۔اس قسم کے فیصلے کابینہ کی منظوری کے بغیر نہیں ہو سکتے۔پاک پی ڈبلیو ڈی کا دفتر سرائیکی خطہ کے مرکز میں ہے۔ بہاولپور منتقلی سے دوسرے شہروں کے لوگوں کو مشکلات ہونگی۔ذاتی کمپلیکس چھوڑ کر دوسرے شہر میں کرائے کی عمارت میں ادارہ منتقل کرنا دانشمندانہ فیصلہ نہیں ہے۔ملک احمد حسین ڈیہڑ نے کہا کہ اس فیصلے سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ ملتان کی مرکزی حیثیت کو ختم کرنے کی منظم سازش کی جارہی ھے جسے کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دینگے۔امید ہے عدالت عالیہ عوامی امنگوں کے مطابق میرٹ پر فیصلہ کرے گی۔انہوں نے کہا کہ سرائیکی خطہ کی پہچان پوری دنیا میں ملتان سے منسوب ہے۔ملتان کا حق چھیننے اور مرکزی حیثیت ختم کرنے کی جب جب کوشش ہوگی کوئی اور بولے یا نہ بولے میں خاموش نہیں رہوں گا۔عوام کو بڑے قد والے لیڈروں سے امید تھی کہ پاک پی ڈبلیو ڈی کی منتقلی پر سٹینڈ لیں گے۔ جب سب نے مایوس کیا تو میں ایک بار پھر میدان عمل میں آ گیا ہوں۔

رٹ دائر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -