”انگلینڈ ہمارا قرض دار ہو گیا اور اب اسے چاہئے کہ۔۔۔“ وسیم اکرم نے زبردست مطالبہ کر دیا، پاکستانیوں کے دل کی بات کہہ دی

”انگلینڈ ہمارا قرض دار ہو گیا اور اب اسے چاہئے کہ۔۔۔“ وسیم اکرم نے زبردست ...
”انگلینڈ ہمارا قرض دار ہو گیا اور اب اسے چاہئے کہ۔۔۔“ وسیم اکرم نے زبردست مطالبہ کر دیا، پاکستانیوں کے دل کی بات کہہ دی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق کپتان وسیم اکرم نے انگلینڈ سے جوابی ٹور کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ موجودہ صورتحال میں دورے کے بعد انگلینڈ اینڈ ویلز کرکٹ بورڈ (ای سی بی) پاکستان کرکٹ کا قرض دار ہے، پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) میں شرکت کرنے والے انگلش کرکٹرز خوشگوار یادیں لے کر وطن واپس گئے،اگر ٹیم آتی ہے تو مہمان کھلاڑیوں کی میدان کے اندر اور باہر بھرپور دیکھ بھال ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق انگلینڈ کی ٹیم نے 6-2005ءکے بعد سے پاکستان کا دورہ نہیں کیا لیکن پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے عالمگیر موذی وباءکورونا وائرس کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورتحال میں اپنے سکواڈ کو سیریز کیلئے انگلینڈ بھجوانے کا مشکل فیصلہ کیا جس کے باعث انگلش بورڈ 280ملین پاﺅنڈز کے بھاری نقصان سے بچ گیا، اگرچہ پی سی بی حکام نے بار بار کہا کہ کوئی ڈیل نہیں ہوئی لیکن ای سی بی پر جوابی دورہ کیلئے اخلاقی دباﺅ بڑھنے لگاہے۔ 

قومی ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم نے کہاکہ موجودہ صورتحال میں دورے کے بعد انگلش بورڈ پاکستان کرکٹ کا قرض دار ہے، انگلینڈ کے کرکٹرز پی ایس ایل میں شرکت کیلئے آئے تھے،ایلکس ہیلز اور کرس جورڈن کراچی کنگز کی ٹیم میں شامل رہے جنہوں نے دورے کا بھرپور لطف اٹھایا اور ان کا یہاں ہر لحاظ سے خیال رکھا گیا، سب یہاں سے خوشگوار یادیں لے کر وطن واپس گئے جس کیلئے پی سی بی اور حکومت کو کریڈٹ دینا چاہئے۔ 

ان کا کہنا تھا کہ میں میں یقین دلاتا ہوں اگر انگلش ٹیم پاکستان آئی تو میدان کے اندر اور باہر کھلاڑیوں کی بہترین انداز میں دیکھ بھال ہو گی، ہر میچ میں سٹیڈیم تماشائیوں سے بھرا ہو گا۔ یاد رہے کہ اس سے قبل پی سی بی کے چیئرمین احسان مانی نے بھی کہا تھا کہ 2022ءمیں انگلش ٹیم کے دورہ پاکستان سے انکار کی کوئی وجہ نظر نہیں آتی جبکہ چیف ایگزیکٹیو وسیم خان کا کہنا تھا کہ اگر اس سے قبل ای سی بی مختصر دورے کیلئے اپنی ٹی 20سائیڈ بھی بھجوائے تو بڑی خوش آئند بات ہو گی۔ 

مزید :

کھیل -