دہشت گردی کیخلاف تمام جماعتیں متحد، پارلیمانی رہنماﺅں نے سزائے موت پر عملدرآمد کی حمایت کر دی

دہشت گردی کیخلاف تمام جماعتیں متحد، پارلیمانی رہنماﺅں نے سزائے موت پر ...
دہشت گردی کیخلاف تمام جماعتیں متحد، پارلیمانی رہنماﺅں نے سزائے موت پر عملدرآمد کی حمایت کر دی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پارلیمانی جماعتوں کے رہنماﺅں نے سزائے موت پر عملدرآمد کرنے کی حمایت کر دی ہے اور تمام پارلیمانی رہنماﺅں کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف ہم سب متحد ہیں۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم نواز شریف کی زیر صدارت پارلیمانی رہنماﺅں کا اجلاس ہوا جس میں تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بھی شرکت کی۔ ذرائع کے مطابق پارلیمانی جماعتوں نے سزائے موت پر عملدرآمد کی حمایت کی اور کہا کہ دہشت گردوں کے خلاف پیغام ہے کہ ہم سب متحد ہیں۔ امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے اجلاس کو تجویز دی کہ سال 2015ءکو امن کے سال کے طور پر منایا جائے جس پر اجلاس کے شرکاءنے اتفاق کیا۔

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے انسداد دہشت گردی ماہرین پر مشتمل کمیٹی بنانے کی تجویز دی جو ایک ہفتے میں دہشت گردی کے خاتمے سے متعلق حکمت عملی کا مسودہ سامنے لا سکے۔ ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے معاملے پر حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔ اجلاس میں شریک اسفندر یار ولی کا کہنا تھا کہ قومی مفاد کیلئے عمران خان اور نواز شریف اختلافات بھول کر ایک ہو جائیں۔ ایم کیو ایم کے رہنماءگوڈیل کا کہنا تھا کہ کراچی سمت پورے ملک میں دہشت گرد موجود ہیں جن کا خاتمہ کیا جائے۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -