مہمند میں پی ٹی آئی کے ایم این  اے منظور فنڈز پر سیاست  چمکانے سے گریز کرے،نثار مہمند

      مہمند میں پی ٹی آئی کے ایم این  اے منظور فنڈز پر سیاست  چمکانے سے گریز ...

  

مہمند (نمائندہ پاکستان) مہمند، فاٹا انضمام کے بعد AIP پروگرام کے تحت ضلع مہمند کیلئے منظور ہونے والے فنڈز پر حکمران جماعت کے ایم این اے اپنی سیاست نہ چمکائیں۔ ایم این اے نے ورسک گریڈ سٹیشن میں نئی فیڈر کا غیر قانونی افتتاح کیا ہے۔ صوبائی فنڈز صوبائی اسمبلی کے نمائندوں کی مشاورت سے خرچ ہوگی۔ ایم این اے جھوٹے افتتاح پر قوم کو گمراہ نہ کرے۔ ممبر صوبائی اسمبلی پی کے 103 اور ضلع مہمند عوامی نیشنل پارٹی صدر نثار مہمند نے پارٹی عہدیداروں کے ساتھ ایک ہنگامی پریس کانفرنس میں ورسک گریڈ سٹیشن میں AIP پروگرام (Accelerator Implementation Program) کے فنڈ سے حکمران جماعت کے ایم این اے کی جانب سے نئے فیڈر کے افتتاح پر رد عمل میں کہا کہ مذکورہ فیڈر کیلئے اے آئی پی فنڈ ایک کروڑ 27 لاکھ منظوری سے فیڈر شروع کیا ہے جو کہ صوبائی پروگرام ہے اس میں ایم این اے مداخلت نہیں کر سکتے ہیں۔ ایم این اے اس قسم کے جھوٹے افتتاح سے قوم کو گمراہ نہ کرے۔ اگر وہ واقعی اپنے علاقے کیلئے مخلاص ہے تو پشاور اور چارسدہ سے گیس منظور کرائے۔ نثار مہمند نے ایم این اے سے سوال کیا کہ اگر یہ فیڈر ان کے فنڈ سے منظور ہوا ہے تو وہ قوم کو بتائے کہ اس کیلئے فنڈز کہاں سے منظور کیا ہے۔ ایم پی اے نثٓر مہمند نے کہا کہ ایک دن پہلے انہوں نے خود اس فیڈر کا افتتاح کیا ہے جبکہ ایم این اے کا افتتاح بالکل غیر قانونی ہے۔ ایم پی اے نے مزید کہا کہ اس ماہ اُن کی کوششوں سے یکہ غنڈ فیڈر کی مرمت، تحصیل امبار، پڑانگ غار، پنڈیالئی اور ہلکی گنداؤ کے نئے فیڈرز بھی لگائے جائینگے۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -