حکومت نے قومی ایشوز پر اعتماد میں نہ لیا تو اتحاد ختم‘ سردار اختر مینگل

  حکومت نے قومی ایشوز پر اعتماد میں نہ لیا تو اتحاد ختم‘ سردار اختر مینگل

  

ڈیرہ غازیخان (سٹی رپورٹر)بلوچستان نیشنل پارٹی کے سربراہ رکن قومی اسمبلی سرداراخترجان مینگل نے کہاہے کہ ہم نے حکومت کوووٹ دیا لیکن حکومت نے چیف الیکشن کمشنر اور بلوچستان کے ممبر کی تعیناتی سے متعلق ہمیں اعتماد میں لیناپسند نہیں کیا اورہم نے حکومت کو چیف الیکشن کمشنر کی تعیناتی سے متعلق اپنے خدشات سے آگاہ کردیاہے جبکہ اتحادی اسے کہتے ہیں جسے ہرفیصلہ پراعتماد میں لیاجائے - حکومت نے اگر ایسے معاملات پراعتماد میں نہ لیاتوپھراتحادبرقرار نہیں رہ سکے گامیڈیاکے نمائیدوں (بقیہ نمبر14صفحہ12پر)

سے گفتگوکرتے ہوئے سردار اخترجان مینگل نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت کاساتھ ہم نے بلوچستان کے لاپتہ افرادکی بازیابی سمیت دیگرچھ نکات پردیاتھا اور حکومت نے ہمارے مطالبات پر عمل درآمد کے لیے ایک سال کی مہلت مانگی تھی تاہم ایک سال کاعرصہ گزرجانے کے باوجود ہمارے مطالبات پر کوئی خاطرخواہ پیش رفت نہیں ہوسکی ہے اور ہمارے خدشات پر حکومتی کمیٹی نے مزیدمہلت مانگی ہے تاہم ہماری سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کااجلاس 22 دسمبر کوکراچی میں حکومتی مہلت کاجائزہ لے گا اگر سنٹرل ایگزیکٹوکمیٹی نے حکومت کومہلت دی توٹھیک ورنہ ہم حکومت کو ٹا ٹا،بائے بائے کہہ دینگے انہوں نے مزیدکہاکہ حکومت نے ہمیں چیف الیکشن کمشنر سمیت بلوچستان کے الیکشن ممبر کی تعیناتی سے متعلق مشاورت کرناتودورکی بات اعتماد میں لینابھی پسند نہیں کیا جبکہ ہم نے حکومت کو چیف الیکشن کمشنر کی تعیناتی سے متعلق اپنے خدشات سے متعلق آگاہ کردیاہے سرداراخترمینگل حکومت کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اتحادی اسے کہتے ہیں جسے ہرفیصلہ پراعتماد میں لیاجائے اور اگر حکومت نے ایسے اہم معاملات پر اعتماد میں نہ لیاتو پھر اتحاد برقرار نہیں رہے گا۔ تاہم حیران ہوں کہ مہنگائی کے بعد بھی عوام کیوں خاموش ہے صوبوں کو اختیارات اور عوام کو ریلیف نہ دینے سے ملک دو لخت ہو انہوں نے کہاکہ پی ٹی آئی کی حکومت پرویزمشرف کو تحفظ دے رہی ہے اورہم نے پرویزمشرف کے معاملہ پر حکومت سے اور اسمبلی کے فلورپربھی اعتراض اٹھایاہے انہوں نے کہاکہ پرویزمشرف نے بلوچستان کے عوام پر سب سے زیادہ مظالم کیے ہیں مگر پرویزمشرف ایک دن بھی تھانے نہیں گئے اور انہیں گارڈ آف آنر دے کر دئبی بھیجاگیاتھا ملک میں نئے صوبوں کے قیام سے متعلق بات کرتے ہوئے سردار اخترمینگل نے کہا کہ یم کیوایم سندھ کو تقسیم کرناچاہتی ہے لیکن ہم سندھ کی تقسیم کے مخالف ہیں تاہم یہ دیکھنا ہو گا کہ ایم کیوایم سندھ کوخود تقسیم کرناچاہتی ہے یاکسی اور کے اشارے پر چل رہی ہے۔

اختر مینگل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -