عمران خان نے دورہ ملائیشیا کے دوران یہ تاریخی کام بھی کرنا تھا مگراب۔۔۔ایسی خبرکہ جان کر آپ کو بھی دکھ ہوگا

عمران خان نے دورہ ملائیشیا کے دوران یہ تاریخی کام بھی کرنا تھا مگراب۔۔۔ایسی ...
عمران خان نے دورہ ملائیشیا کے دوران یہ تاریخی کام بھی کرنا تھا مگراب۔۔۔ایسی خبرکہ جان کر آپ کو بھی دکھ ہوگا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اطلاعات کے مطابق وزیراعظم نے سعودی عرب کے دباومیں آکر ملائیشیا کا اہم دور منسوخ کردیا ہے،جیو نیوز کے مطابق سفارتی ذرائع نے دعوٰی کیاہے کہ سعودی عرب کے دباو¿ پر وزیر اعظم عمران خان نے ملائیشیاکا اہم سرکاری دورہ منسوخ کر دیا ہے۔

ذرائع کے مطابق کوالالمپور سربراہ اجلاس میں وزیر اعظم کی نمائندگی اب وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کریں گے۔ سرکاری سطح پر تاحال دورے کی منسوخی کا کوئی اعلان نہیں کیا گیا۔

ایک نجی ٹی وی کی کچھ روز قبل چلائی گئی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم کے ا س دورے کے دوران جہاں انتہائی اہم سیاسی معاملات پر بات چیت ہوناتھی وہیں اس دورے میں پہلی بارکسی وزیر اعظم کا ملائیشیامیں مقیم پاکستانیوں کے بہت بڑے جلسے سے خطاب بھی متوقع تھاجس کیلئے پاکستانی بہت پرجوش تھے۔اس جلسے کے انتظامات ملائیشیا میں مقیم پاکستانیوں کی جانب سے کئے جانے تھے تاہم اگر دورہ منسوخ ہوتاہے توظاہر ہے جلسے کے منتظر پاکستانیوں کاانتظار بھی رائیگاں جائے گا۔

ملائیشین میڈیا کے مطابق 23 نومبر کو ڈاکٹر مہاتیر نے اعلان کیا تھا کہ ان کا ملک کوالالمپور میں اسلامی سربراہ اجلاس منعقد کرے گا، جو 19سے 21 دسمبر تک جاری رہے گا، سمٹ کا تھیم قومی سلامتی کے حصول میں ترقی کا کردارہو گا، سمٹ میں انڈونیشیا،پاکستان، قطر اور ترکی کے سربراہان حکومت و مملکت ، کے علاوہ 450 لیڈرز، اسکالرز، مذہی اکابرین شرکت کریں گے۔

ترکی سے صدر طیب اردوان، قطر کے امیر شیخ تمیم بن حماد الثانی، انڈونیشیا کے صدر جوکو ودودو اور پاکستان سے عمران خان کو اجلاس میں شریک ہونا تھا۔ڈاکٹر مہاتیر محمد نے رواں سال اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اجلاس کے موقع پر نیو یارک میں وزیر اعظم عمران خان اور صدر طیب اردگان سے ملاقاتوں کے دوران کوالالمپور سربراہ اجلاس کا منصوبہ بنایا تھا۔

مزید :

قومی -