پاکستانی قونصلیٹ دبئی سے لوگوں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کی جارہی ہیں

پاکستانی قونصلیٹ دبئی سے لوگوں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کی جارہی ہیں
پاکستانی قونصلیٹ دبئی سے لوگوں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کی جارہی ہیں

  

دبئی (طاہر منیر طاہر) قونصلیٹ جنرل آف پاکستان دبئی ناردرن ایمریٹس میں مقیم پاکستانیوں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کررہی ہے۔ قونصلیٹ کا سٹاف سائلین کے مسائل حل کرنے کے لئے ہر وقت مستعد ہے جبکہ دور دراز کی ریاستوں میں مقیم پاکستانیوں کو قونصلیٹ کی سروسز وہیں مہیا کی جارہی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار قونصلیٹ جنرل آف پاکستان دبئی کے قونصل جنرل احمد امجد علی نے امارات میں موجود پاکستانی صحافیوں کی تنظیم پاکستان جرنلسٹس فورم PJF کے عہدیداران و اراکین کے ساتھ ایک خیر سگالی ملاقات کے دوران کیا۔

اس موقع پر قونصل جنرل کے ہمراہ سید مصور عباس، ہیڈ آف چانسلری گیان چند اور پریس قونصلر عاشق حسین شیخ بھی موجود تھے جبکہ پاکستان جرنلسٹس فورم کی طرف سے صدر اشفاق احمد، حافظ زاہد علی، ارشد انجم، سبط عارف، راجہ اسد، اشفاق احمد اے آر وائی، زمرد بونیری، خالد محمود گوندل، احمد قریشی، عارف شاہد ودیگر موجود تھے۔ اس موقع پر یو اے ای کے 48 ویں قومی دن کے حوالے سے خوبصورت مفلر جبکہPJFکی طرف سے خیر سگالی کے جذبہ کے تحت تحفہ بھی پیش کیا گیا۔ قونصل جنرل سے ملاقات کے دوران دو صحافی خواتین عاصمہ علی زین اور سعدیہ عباسی بھی موجود تھیں۔ دوران ملاقات قونصل جنرل نے کہا کہ صحافیوں کے ساتھ ملاقات سے انہیں مسائل کی آگاہی ہوتی ہے جس سے لوگوں کے مسائل حل ہوتے ہیں۔

PJFکے صدر اشفاق احمد نے کہا کہ امارات میں مقیم پاکستانی صحافی پاکستان کا مثبت امیج پیش کررہے ہیں جبکہ صحافی اپنی مثبت صحافت کے ذریعے امارات اور پاکستان کے مابین تعلقات کو بھی مضبوط کررہے ہیں۔ قونصل جنرل احمد امجد علی نے کہا کہ امارات میں کچھ مفاد پرست لوگ اور نام نہاد ادارے سادہ لوح پاکستانیوں کو لوٹنے میں مصروف ہیں۔ ایسے لوگوں اور اداروں کی سرکوبی کے لئے حکومت کو خط لکھ دیا گیا ہے۔ قونصل جنرل نے کہا کہ اگر آپ کو بھی ایسے لوگوں کا پتہ ہو تو انہیں ضرور مطلع کریں تاکہ ان کے خلاف فوری کارروائی کی جائے۔ اس سلسلہ میں امارات میں مقیم پاکستانیوں سے کہا گیا ہے کہ اگر انہیں بھی کسی سے شکایت ہو تو وہ قونصلیٹ سے رابطہ کریں۔

اس ملاقات میں صحافیوں کی فلاح وبہبود کے سلسلہ میں بھی بات چیت ہوئی جس پر قونصل جنرل نے یقین دلایا کہ وہ اس سلسلہ میں ضروری اقدامات کریں گے۔ صحافیوں نے مطالبہ کیا کہ ابتدائی سہولتوں میں تمام صحافیوں کو انشورنس کی اندرون و بیرون ملک سہولت فراہم کی جائے۔

مزید :

عرب دنیا -