عدالت نے جلدبازی کا مظاہرہ کیا،ٹرائل کورٹ کوتفصیلی فیصلہ سناناچاہیے تھا،ماہر قانون خالد رانجھا کا خصوصی عدالت کے فیصلے پر ردعمل

عدالت نے جلدبازی کا مظاہرہ کیا،ٹرائل کورٹ کوتفصیلی فیصلہ سناناچاہیے ...
عدالت نے جلدبازی کا مظاہرہ کیا،ٹرائل کورٹ کوتفصیلی فیصلہ سناناچاہیے تھا،ماہر قانون خالد رانجھا کا خصوصی عدالت کے فیصلے پر ردعمل

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)ماہر قانون خالد رانجھا نے اسلام آباد کی خصوصی عدالت کے فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ عدالت نے جلدبازی کا مظاہرہ کیا،ٹرائل کورٹ مختصرفیصلہ نہیں سناسکتی،ٹرائل کورٹ کوتفصیلی فیصلہ سناناچاہیے تھا۔

ماہر قانون خالد رانجھا نے اسلام آبادکی خصوصی عدالت کی جانب سے سنگین غداری کیس میں سزائے موت سنائے جانے پرردعمل دیتے ہوئے کہاکہ عدالت نے جلدبازی کا مظاہرہ کیا،عدالت نے وفاقی حکومت کی درخواست مسترد کی،وفاق نے درخواست دی تھی کہ دیگرافرادکابھی ٹرائل لیاجائے۔

خالد رانجھا نے مزید کہا کہ ٹرائل کورٹ مختصرفیصلہ نہیں سناسکتی،ٹرائل کورٹ کوتفصیلی فیصلہ سناناچاہیے تھا،انہوںنے کہا کہ وفاقی حکومت بھی سپریم کورٹ میں اپیل دائر کرسکتی ہے،سپریم کورٹ کے فیصلے کا اطلاق پرویز مشرف پر بھی ہوگا۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -