سانحہ چونیاں، انسداد دہشتگردی عدالت کا تاریخی فیصلہ، مجرم سہیل شہزاد کو 3 بار سزائے موت سنادی

سانحہ چونیاں، انسداد دہشتگردی عدالت کا تاریخی فیصلہ، مجرم سہیل شہزاد کو 3 ...
سانحہ چونیاں، انسداد دہشتگردی عدالت کا تاریخی فیصلہ، مجرم سہیل شہزاد کو 3 بار سزائے موت سنادی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) انسداد دہشتگردی کی عدالت نے سانحہ چونیاں کے مجرم سہیل شہزاد کو 3 بار موت کی سزا سنادی۔

عدالت کی جانب سے 4 معصوم بچوں کو زیادتی کے بعد قتل کرنے والے درندہ صفت مجرم سہیل شہزاد کو کوٹ لکھپت جیل میں سزا سنائی گئی۔ عدالت نے مجموعی طور پر مجرم کو 3 بار سزائے موت، ایک بار عمر قید اور 32 لاکھ روپے جرمانے کی سزائیں سنائی ہیں۔

خیال رہے کہ 16 ستمبر کو چونیاں سے اغوا ہونے والے 2 بچوں کی لاشیں ملی تھیں جو بعد ازاں 4 ہوگئی تھیں، پولیس نے سائنسی بنیادوں پر تفتیش کرتے ہوئے یکم اکتوبر کو مجرم سہیل شہزاد کو گرفتار کیا تھا جو لاہور ہائیکورٹ کی کینٹین کے تندور پر روٹیاں لگانے کا کام کرتا تھا۔ پولیس کی جانب سے مجرم کا 11 نومبر کو چالان پیش کیا گیا ، اس کا 25 نومبر کو ٹرائل شروع ہوا اور آج (17 دسمبر کو) انسداد دہشتگردی عدالت نے کیس کا فیصلہ سنادیا۔

مزید :

Breaking News -جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -لاہور -اہم خبریں -