پنجاب کی جیلوں میں آنیوالے ہر قیدی کی نفسیاتی تشخیص کروانے کا فیصلہ

پنجاب کی جیلوں میں آنیوالے ہر قیدی کی نفسیاتی تشخیص کروانے کا فیصلہ

  

 لاہور (کر ائم رپو رٹر) پنجاب کی جیلوں میں آنے والے ہر قیدی کی نفسیاتی تشخیص کروانے کا فیصلہ کر لیا گیا انسپکٹر جنرل جیل خانہ پنجاب ملک مبشر احمد خاں نے قیدیوں کی جسمانی صحت کے ساتھ ساتھ نفسیاتی صحت کیلئے بھی احسن اقدام اٹھایا ہے اور اب جیل آنے والے ہر قیدی کی سپرنٹنڈنٹ جیل کے ملاحظہ سے پہلے ماہر نفسیات نفسیاتی تشخیص کرے گا آئی جی جیل نے کہا کہ یہ نفسیاتی تشخیص قیدی کے ساتھ برتاؤ اور جیل کا نظام بہتر انداز میں چلانے میں مدد گار ثابت ہو گی اس کے ساتھ ساتھ قیدی کا ایام اسیری کے دوران نفسیاتی علاج بھی ممکن ہو سکے گا اس نفسیاتی علاج کے ذریعے قیدیوں کو ذہنی دباؤ اور خودکشی جیسے منفی احساسات سے بھی دور رکھا جائے گا ملک مبشر احمد خاں تے کہا کہ قیدیوں ی جسمانی صحت کے ساتھ ساتھ نفسیاتی صحت بھی بہت ضروری ہے تاکہ وہ جیل سے مثبت سوچ لے کر رہا ہوں اور پر امن معاشرے کی تشکیل میں اپنا کردار ادا کریں۔

مزید :

علاقائی -