جنرل الیکشن سے معاشی بحران ختم ہونگے، جہانزیب کھچی

جنرل الیکشن سے معاشی بحران ختم ہونگے، جہانزیب کھچی

  

 میلسی (نامہ نگار)پاکستان تحریک انصاف کے سابق صوبائی وزیر محمد جہاں زیب خان کھچی ایم پی اے نے کہا ہے کہ حکومت کی جانب سے پٹرولیم مصنوعات میں حالیہ کمی(بقیہ نمبر5صفحہ6پر)

 گلوبل صورت حال کے حوالے سے اونٹ کے منہ میں زیرہ کے مترادف ہے حالانکہ عالمی سطح پر پٹرولیم مصنوعات کے گرنے پر کم ازکم 80 /90 روپے فی لٹر پٹرول آسانی سے کم کیا جا سکتا تھا مگر 10 روپے فی لٹر کمی کر کے قوم کی امید کا مذاق اڑایا گیا ہے۔حکومت عوامی توقعات کے برعکس اقدامات کر کے عوام میں جو غصہ پیدا کر رہی ہے وہ انتخابات میں اسے مسترد کر کے  قوم اتارے گی ان خیالات کا اظہار  انہوں نے پی ٹی آئی کے ورکرز سے گفتگو میں کیا۔انہوں نے کہا کہ موجودہ کمی بھی عوامی پریشر سے ممکن ہوئی۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کا ویڈیو لنک کے ذریعے  طلبہ سے خطاب ان کے اس یقین کا مظہر ہے کہ قوم کے نوجوان اس کے  مستقبل کو درخشاں کر سکتے ہیں اور وہی جبر کی زنجیریں توڑ کر قوم کواس  استحصال سے نجات دلا سکتے  ہیں جو ریجیم  چینج کے وقت سے  ملک کو معاشی  زوال اور قوم کو مشکلات میں مبتلا کیے ہوئے ہے انہوں نے کہا کہ احتجاج جمہوریت کا حصہ ہے۔عمران خان نے خود پر ظالمانہ قاتلانہ حملے کے باوجود پر امن احتجاج سے خود کو ہمیشہ کی طرح لیڈر ثابت کیا۔جہاں زیب خان کھچی نے کہا کہ جنرل الیکشن ہی موجودہ معاشی بحران سے قوم کونجات دلا سکتے ہیں۔معیشت روز بروز سکڑ رہی ہے  مگر حکومت اپوزیشن سے انتقام لینے کے لیے حربے استعمال کر رہی ہیبند گلی سے نکلنے کے لیے پی ڈی ایم انتخابات کی راہ اختیار کرے اس میں سب کا فائدہ ہے  #

مزید :

ملتان صفحہ آخر -