وفاقی وزیرخزانہ ریگولیٹری ڈیوٹی پر نظرثانی کریں: لاہورچیمبر

وفاقی وزیرخزانہ ریگولیٹری ڈیوٹی پر نظرثانی کریں: لاہورچیمبر

لاہور (کامرس رپورٹر) لاہور چیمبر نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کی جانب سے بہت سی مصنوعات پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے نفاذ کی مخالفت کرتے ہوئے وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار پر زور دیا ہے کہ وہ اس فیصلے پر نظر ثانی کریں۔ ایک بیان میں لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر میاں نعمان کبیر نے ریگولیٹری ڈیوٹی کے نفاذ کو مِنی بجٹ قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس قدم سے صارفین پر سولہ سے بیس ارب روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ فرنس آئل، الیکٹرانک ایکویپمنٹ، ڈبہ بند خوراک اور میٹل سکریپ وغیرہ کا شمار لگژری آئٹمز میں نہیں ہوتا۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کا ایک بڑا حصہ تھرمل ذرائع سے پیدا ہوتا ہے، فرنس آئل پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے نفاذ سے یہ بجلی مہنگی ہوگی جس سے صنعتوں کی پیداواری لاگت بڑھے گی۔  میاں نعمان کبیر نے کہا کہ صنعت و تجارت کو پہلے ہی بہت سے مسائل کا سامنا ہے، ایسے میں ریگولیٹری ڈیوٹی مزید مسائل پیدا کرے گی۔ لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر نے کہا کہ نجی شعبہ معاشی ترقی و خوشحالی کے لیے حکومتی کوششوں کو آگے بڑھانا چاہتاہے مگر اس کے لیے ضروری ہے کہ حکومت اسے سہولیات دے۔انہوں نے وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار پر زور دیا کہ معیشت کے وسیع تر مفاد میں اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے پر نظر ثانی کریں اور ضروری اشیاء پر سے ریگولیٹری ڈیوٹی ہٹانے کے احکامات صادر کریں۔

مزید : کامرس