وزیراعظم نواز شریف نے آصف زرداری کو گلہ دیدیا، سابق صدر کا جوابی شکوہ

وزیراعظم نواز شریف نے آصف زرداری کو گلہ دیدیا، سابق صدر کا جوابی شکوہ
وزیراعظم نواز شریف نے آصف زرداری کو گلہ دیدیا، سابق صدر کا جوابی شکوہ

  


کراچی(ویب ڈیسک)وزیراعظم میاں محمد نواز شریف اور پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف علی زرداری کے درمیان ہونیوالی ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی ہے ،کراچی میں ٹارگٹڈآپریشن کے حوالے سے سندھ حکومت کی جانب سے تعاون نہ کرنے پر وزیر اعظم نے آصف زرداری سے شکوہ کیا جبکہ آصف علی زرداری نے متوقع انتخابات اور گورنرگلگت بلتستان کی تقرری پر جوابی شکوہ کیا۔ ملاقات میں سینیٹ انتخابات میں ہارس ٹریڈنگ اور پیسے کا کھیل روکنے کے لئے تمام جماعتوں سے بات چیت کرکے حکمت طے کرنے ،ملکی سیاسی صورتحال ، نیشنل ایکشن پلان،گلگت بلتستان کے انتخابات ، وفاقی وزیر کی بطور گورنر تعیناتی اور دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

 ذرائع کے مطابق گورنرہاﺅس میں ہونیوالی ملاقات میں وزیر اعظم نے سابق صدر آصف علی زرداری کی مفاہمتی پالیسی کی تعریف کی اور کہا کہ سندھ کی دو بڑی سیاسی جماعتوں پیپلز پارٹی اور متحدہ قومی موومنٹ کے درمیان بات چیت کا آغاز خوش آئند ہے۔ وزیر اعظم نے سندھ کی ترقی کے لیے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا اور کہا کہ سندھ کی ترقی میں وفاقی حکومت ہر ممکن کردار ادا کرے گی لیکن حکومت سندھ وفاق کے ساتھ تعاون نہیں کرتی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ حکمران جماعت اور پیپلز پارٹی ملکر ملک کو چیلنجز سے نکالنے کے لیے کردار ادا کر سکتے ہیں۔ اس کے لیے ضروری ہے کہ دونوں جماعتوں میں ورکنگ ریلیشن شپ بڑھائی جائے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم نے پیپلز پارٹی کی جانب سے مختلف ایشوز پر تحفظات دور کرنے کا بھی یقین دلایا۔

دنیا نیوز کے مطابق  دونوں رہنماو¿ں نے اس بات پر اتفاق کیا کہ ملک کو درپیش چیلنجز سے نکالنے ، جمہوری عمل کی مضبوطی اور دیگر عوامی ایشوز کے حل کے لیے مل کر کردار ادا کریں گے اور تمام مسائل کو بات چیت کے ذریعے حل کیا جائے گا۔ آصف علی زرداری نے وفاقی حکومت کی جانب سے گلگت بلتستان میں حالیہ اقدام، متوقع انتخابات میں حکومتی مداخلت اور وفاقی وزیر امور کشمیر کے بطور گورنر گلگت بلتستان تقرر پرپیپلز پارٹی کے تحفظات سے آگاہ کیا۔

مزید : کراچی