سٹاک مارکیٹ ، سرمایہ کاروں کی دلچسپی کے باعث زبردست تیزی ، انڈیکس میں 685پوائنٹس کا اضافہ

سٹاک مارکیٹ ، سرمایہ کاروں کی دلچسپی کے باعث زبردست تیزی ، انڈیکس میں ...

کراچی(اکنامک رپورٹر)پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں دو روزہ مندی کے بعد کاروباری ہفتے کے آخری روز جمعہ کو سرمایہ کاروں کی جانب سے حصص کی قیمتوں کی نچلی سطح پر خریداری کے سبب ریکوری آئی جس سے کے ایس ای100انڈیکس کا43ہزار کا نفسیاتی حد بحال ہوگیا اور 684.75پوائنٹس کے اضافے سے انڈیکس 43627.10پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیاجب کہ مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں بھی ایک کھرب32ارب 38کروڑ4لاکھ روپے کا اضافہ ہوا البتہ حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم صرف 14کروڑ83لاکھ حصص کی لین دین تک محدود رہا جو جمعرات کی نسبت 7کروڑ11لاکھ شیئرز کم ہے ۔گزشتہ روز ٹریڈنگ کا آغاز مثبت زون میں اور ٹریڈنگ کے آغاز پر منافع بخش کمپنیوں کے شیئرز کی خریداری کے سبب تیزی کا سلسلہ شروع ہوا جس کی رفتار ابتداء میں سست تھی لیکن وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ تیزی کی رفتار بڑھتی چلی گئی جس کے نتیجے میں گزشتہ دو ورز سے جاری مندی کے اثرات زائل ہونے لگے اور کے ایس ای100انڈیکس کی گرنے والی نفسیاتی حدیں بھی بحال ہوتی چلی گئیں۔مارکیٹ میں کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس 684.75پوائنٹس کے اضافے سے 43627.10پوائنٹس بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس396.88 پوائنٹس کے اضافے21850.58 پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس464.24پوائنٹس کے اضافے سے 31456.93پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔گزشتہ روز مجموعی طور پر379 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 259 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ 93کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں کمی اور27 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔بیشتر کمپنیوں کے حصص کی قیمت میں اضافے کے سبب مارکیٹ کے سرمائے میں ایک کھرب32ارب 38کروڑ4لاکھ روپے کااضافہ ریکارڈکیا گیا جس کے سبب مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 89کھرب19ارب 8کروڑ16لاکھ روپے سے بڑھ کر90کھرب 51ارب 46کروڑ 20لاکھ روپے ہو گیا ۔جمعہ کو5ارب روپے مالیت کے14کروڑ83 لاکھ روپے 58ہزار شیئرز کا کاروبار ہوا جب کہ اس کے مقابلے میں جمعرات کو 7ارب روپے مالیت کے 21کروڑ94لاکھ 82ہزار شیئرز کا کاروبار ہوا۔

اس لحاظ سے کاروباری سرگرمیاں جمعہ کو مایوس کن رہی۔

اسٹاک ماہرین کے مطابق مقامی اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کی جانب سے طویل المیعاد سرمایہ کاری کے بجائے یومیہ بنیادوں پر حصص کی خرید وفروخت کا رجحان دیکھا جارہا ہے حصص کی قیمتیں بڑھنے پر فروخت اور کم ہونے پر خریداری کی جارہی ہے جس کے نتیجے میں محدود پیمانے پر تیزی مندی کا سلسلہ جاری ہے تاہم اس طرز عمل سے کاروباری سرگرمیاں محدود ہوگئی ہیں ۔

مزید : کامرس


loading...