معاشی ترقی میں خواتین کا کردار بہت اہم ہے: ملک طاہر جاوید

معاشی ترقی میں خواتین کا کردار بہت اہم ہے: ملک طاہر جاوید

لاہور (کامرس رپورٹر) پنجاب کمیشن برائے خواتین کی چیئرمین پرسن فوزیہ وقار نے کہا ہے کہ ان کا ادارہ خواتین کے یکساں حقوق اور خودمختاری کے لیے سرگرم عمل ہے کیونکہ مستحکم معاشی ترقی کے لیے یہ ناگزیر ہے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاویدسے لاہور چیمبر میں ملاقات کے دوران کیا۔ اس موقع پر منسٹری آف انڈسٹری کی نمائندہ ڈاکٹر صبا فر دوس ، چیئر پرسن تبسم انور،پنجاب کمیشن کی رخسانہ ،ناصرہ تسکین، شمیم اختر، طلعت حفیظ، نیلوفر سکندر، شگفتہ رحمن، عظمیٰ محمود اور دیگر ممبران بھی اس موقع پر موجود تھے۔ فوزیہ وقار نے کہا کہ پنجاب کمیشن برائے خواتین ترقی کے زیادہ مواقع پیدا کرنے اور خواتین کے ساتھ امتیازی سلوک کے خاتمے کے لیے بھرپور کوششیں کررہا ہے کیونکہ اس کے بغیر معاشی ترقی کے اہداف پورے کرنا ممکن نہیں۔ لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر نے کہا کہ قومی ترقی میں خواتین کا کردار سب سے اہم ہے اور یہ بحیثیت ماں، بیٹی، بہن اور ورکنگ خواتین بڑے اہم فرائض سرانجام دے رہی ہیں، بدقسمتی سے خواتین کو سماجی و معاشی مسائل کا سامنا ہے جنہیں ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ تجارتی و معاشی سرگرمیوں میں حصہ لینے کے لیے خواتین کی حوصلہ افزائی کی جانی چاہیے کیونکہ ملک کی آبادی کا نصف حصہ خواتین پر مشتمل ہے۔ ماضی کی نسبت آج صورتحال بہت بہتر ہے اور خواتین غیرروایتی شعبوں سے ہٹ کر بوتیک، ٹیکسٹائل ڈیزائننگ، بینکنگ اور انفارمیشن ٹیکنالوجی سمیت دیگر شعبوں میں کامیابی سے کام کررہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حالیہ کچھ عرصہ کے دوران حکومت نے کاروباری شعبہ سے وابستہ خواتین کی ترقی کے لیے کافی کام کیا ہے مگر ابھی بہت کچھ کرنا ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کاروباری شعبہ سے وابستہ خواتین کی طرف سے تیار کردہ مصنوعات کو ٹیکسوں اور ڈیوٹیوں میں رعایت دیکر ان کی حوصلہ افزائی کرسکتی ہے۔ لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر نے کہا کہ خواتین کو تمام تجارتی و معاشی شعبوں میں صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کرنا چاہیے تاکہ ملک معاشی بحالی کا ہدف کم سے کم وقت میں حاصل کرسکے۔انہوں نے مزید کہا کہ خواتین کی تعلیم و تربیت بہت ضروری ہے تاکہ اْن کی صلاحتیں نکھر کر سامنے آئیں، انہوں نے کہا کہ تجارتی و معاشی سرگرمیوں میں خواتین کی شمولیت یقینی بنانے کے لیے نجی شعبے کو باہمی مشاورت سے منصوبہ بندی کرنا ہوگی۔

مزید : کامرس


loading...