صنعتی پیداواری لاگت میں کمی سے زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ ہو گا : پیاف

صنعتی پیداواری لاگت میں کمی سے زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ ہو گا : پیاف

لاہور (کامرس رپورٹر)پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسوسی ایشنز فرنٹ (پیاف)کے قائم مقام چیئرمین پیاف تنویر احمد صوفی اور وائس چیئرمین خواجہ شاہ زیب اکرم نے ایک سال میں زرمبادلہ کے ذخائر میں 5.4ارب ڈلرز کی کمی کو تشویشناک قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ کیلئے برآمدات میں اضافہ کیلئے موثر اقدامات کیے جائیں جن میں صنعتی شعبہ کی پیداواری لاگت میں کمی کیلئے بجلی و گیس کی قیمتوں میں کمی کی جائیں کیونکہ ملکی مصنوعات کی مہنگی پیداواری لاگت سے قیمتوں میں اضافہ اور بیرون ملک منڈیوں میں پاکستانی مصنوعات کی مانگ میں کمی اور برآمدات میں مسلسل کمی سے تجارتی خسارہ بڑھ رہا ہے اور زرمبادلہ کے ذخائر کمی کا شکار ہیں ۔ صنعتی شعبہ کی پیداواری لاگت میں کمی سے ہی برآمدات اور زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ ہوگا ۔کیونکہ ہمسائیہ ممالک میں بجلی و گیس کی قیمتوں میں کمی کے باعث ان کی اشیاء سستی اور بین الاقوامی مارکیٹ میں ان کی مانگ زیادہ ہے جبکہ پاکستانی اشیاء پیداواری لاگت بڑھنے سے مہنگی ہونے سے مانگ میں کمی سے برآمدات کم ہورہی ہیں اس طرف خصوصی توجہ کی اشد ضرورت ہے تاکہ برآمدات اور زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ سکیں۔

بین الاقوامی حالات کے مطابق برآمدات کو سہارا دینے کے تناظر میں بہت ضروری ہے کہ برآمد کننگان کو مراعات دی جائیں اور انکے مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جائے۔

مزید : کامرس


loading...