ڈی ایس پی باغبانپورہ کا سب انسپکٹر کے منہ پر تھپڑ ، آئی جی پنجاب کا نوٹس

ڈی ایس پی باغبانپورہ کا سب انسپکٹر کے منہ پر تھپڑ ، آئی جی پنجاب کا نوٹس

لاہور (کر ائم رپورٹر)ڈی ایس پی باغبانپورہ اور ایس پی کینٹ کے سٹاف آفیسر کے درمیان جھگڑا ہونے پر ڈی ایس پی نے سب انسپکٹر کے منہ پر تھپڑ رسید کردیا اور ایس ایچ او باغبانپورہ کی مدعیت میں ایس پی کینٹ کے سٹاف آفیسر پر مقدمہ درج کر دیا۔بتایا گیا ہے کہ ڈی ایس پی باغبانپورہ قیصر مشتاق کسی متنازعہ اراضی کے حوالے سے درخواست پر ایک پارٹی کے ہمراہ موقع پر پہنچ گیا جبکہ وہاں پہلے سے موجود ایس پی کینٹ کا سٹاف آفیسر دوسری پارٹی کے ہمراہ موجود تھا جہاں ڈی ایس پی باغبانپورہ قیصر مشتاق اور ایس پی کینٹ کے سٹاف آفیسر فیصل ڈیال دونوں پارٹیوں کی درخواستیں اکٹھی ہونے پر انہیں ایس پی کینٹ دفتر جانے کا کہا مگر ڈی ایس پی کی جانب سے ایس پی کینٹ کے سٹاف آفیسر فیصل ڈیال سے تکرار شروع کردی گئی کہ وہ سرکل کا ڈی ایس پی ہے اور وہ بہتر جانتا ہے جس پر فیصل ڈیال کی جانب سے ڈی ایس پی باغبانپورہ کے اقدام کو غیر آئینی کہا گیاتو ڈی ایس پی نے طیش میں آکر سب انسپکٹر کو تھپڑ رسید کردیا جس پر دونوں کے درمیان شدید تلخ کلامی ہو گئی اور ڈی ایس پی موقعہ سے واپس تھانے پہنچ گیا جہاں پر ایس ایچ او باغبانپورہ ملک خالد کی مدعیت میں ایس پی کینٹ کے سٹاف آفیسر پر 155/c کے تحت مقدمہ درج کردیا گیا ،واقعہ کی اطلاع پر آئی جی پنجاب کیپٹن ریٹائرڈ عارف نواز نے نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور کیپٹن ریٹائرڈ امین وینس سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے کہا کہ جو بھی قبضہ گروپ کی سرپرستی کرتا ہوا ثابت پایا گیا تو ا س کے خلاف محکمانہ کارروائی کی جائے گی۔

Ba

مزید : علاقائی


loading...