عدلیہ سے ٹکرا کر ن لیگ مشرف والی غلطی دہرارہی ہے،محمد علی درانی

عدلیہ سے ٹکرا کر ن لیگ مشرف والی غلطی دہرارہی ہے،محمد علی درانی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وفاقی وزیر محمد علی درانی نے کہا ہے کہ عدلیہ سے ٹکرا کر مسلم لیگ (ن) پرویز مشرف والی غلطی دہرارہی ہے۔ 2018ء میں نوازشریف عدلیہ پر1997سے بڑا حملہ کرچکے ہیں۔ شاہد خاقان عباسی قائد ایوان کا فرض ادا کرتے ہوئے اعلیٰ عدلیہ کا تحفظ کریں۔ میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ آئینی بحران خودحکومت نے پیداکیااورپانامہ کا مسئلہ پارلیمان میں لے جانے کی بجا ئے عدالت میں لے گئی۔ پاناما پر چیف جسٹس کو اپریل2016 میں خود میاں صاحب کی ہد ایت پر حکومت نے خط لکھ کر فیصلہ کا اختیار خودعدلیہ کو سونپااور ٹی اوآرز بھی خود بنوائے۔ فیصلہ خلاف آنے کی صورت میں گھر چلے جانے کا اعلان قوم سے خطاب میں خودمیا ں نو از شریف نے ہی کیاتھا۔لہذا احتجاج انہیں اپنے اقدامات کے خلاف کرنا چاہئے۔ حکمران جماعت آئینی اداروں کے سر سے چادر کھینچتے ہوئے اوران کی بنیادیں اکھاڑکراپنے قائد کو واپس نہیں لاسکتی۔محمد علی درانی نے مزیدکہاکہ آج میاں صاحب جمہوری استحکام اور حکومتی انتظام کی آئینی مدت کی تکمیل وتسلسل کی خاطر عدلیہ کا احترام کریں۔

مزید : صفحہ آخر


loading...