موٹرسائیکل چوری کے الزام میں نوجوان کا مبینہ قتل‘ ورثاء کا احتجاجی مظاہرہ

موٹرسائیکل چوری کے الزام میں نوجوان کا مبینہ قتل‘ ورثاء کا احتجاجی مظاہرہ

لڈن(نامہ نگار)موٹر سائیکل چوری کا الزام مالک نے تشدد کر کے نوجوان کو قتل کر دیا خودکشی کا رنگ دیکر نوجوان کا پوسٹ مارٹم کروا کر تین دن بعد نوجوان کی نعش ورثاء کے حوالہ کر دیا ہمارے بیٹے کو قتل کیا گیا ہے ورثاء کا موقف ورثاء اور اہل علا قہ نے نعش کوسڑک پر رکھ کر احتجاج شروع کر دیا پولیس (بقیہ نمبر40صفحہ7پر )

نے کاروائی کی یقین کروا کر روڈ کھلوا دیا تفصیل کے مطا بق لڈن کے نوا حی علا قہ موضع شرف کا 18سالہ نوجوان رہائشی عبد الغفور میلسی کے زمیندار سخاوت کچھی کے گھر عرصہ سے کام کرتا تھا عبد الغفور سخاوت کچھی کا مو ٹر سائیکل لیکر سودا سلف لینے بازار گیا تو وہا ں سے موٹر سائیکل چوری ہو گیا جب اس نے واپس آکر مالک کو بتا یا کہ موٹر سائیکل چوری ہو گیا ہے تو اس نے شک کی بناء پر عبد الغفور پر تشدد کر نا شروع کر دیا جس پر عبدا لغفور جاں بحق ہو گیا سخاوت کچھی نے عبد الغفور کو خودکشی کا رنگ دیکر پوسٹ مارٹم کروا دیا اور تین دن بعدنعش ورثاء کو دیتے ہوئے کہا کہ آپ کا بیٹا فوت ہو گیا جب ورثاء نے دیکھا کہ اس کا تو پوسٹ مارٹم بھی ہوا ہے تو ورثاء نعش سڑک پر رکھ کر روڈ بلاک کر دیا اور کہا کہ ہمار ے بیٹے کو قتل کیا گیا ہے خود کشی کا الزام جھو ٹا ہے اطلاع ملتے ہی تھا نہ لڈن پولیس اور ڈی ایس پی صدر فضل حسین بخاری موقع پر پہنچ گئے اور ورثاء سے مذاکرات کرتے ہوئے کاروائی کی یقین دہا نی کروا کر روڈ کھلوا دیا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...