حکومت نے قرضوں کی ادائیگی کے لیے مزید 50کروڑ ڈالر کا قرضہ لے لیا

حکومت نے قرضوں کی ادائیگی کے لیے مزید 50کروڑ ڈالر کا قرضہ لے لیا
حکومت نے قرضوں کی ادائیگی کے لیے مزید 50کروڑ ڈالر کا قرضہ لے لیا

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) حکومت نے قرضوں اور ان کے سود کی ادائیگی کے لیے مزید 50 کروڑ ڈالر کا قرضہ لے لیا جس کے باعث پاکستان پر واجب الادا قرضوں میں اضافہ ہو گیا ۔نجی نیوز چینل اے آر وائی نیوز کے مطابق غیر ملکی قرضوں کی ادائیگیاں سر پر ہیں جبکہ زرمبادلہ ذخائر می مسلسل کمی واقع ہورہی ہے جس پر قابو پانے کے لیے حکومت نے مزید قرض لے لیا۔وزارت خزانہ ذرائع کے مطابق حکومت پاکستان نے قرضوں کی ادائیگی کے لیے چینی کمرشل بینک سے 50 کروڑ ڈالر قرضہ لیا۔ قرضے پر شرح سود ساڑھے 4 فیصد کے لگ بھگ ہے۔جنوری میں حکومت نے 17 کروڑ 40 لاکھ ڈالر کے کمرشل قرضے لیے۔ رواں مالی سال میں لیے گئے قرضوں کا حجم 6 ارب 60 کروڑ ڈالر ہوگیا ہے۔اقتصادی ماہرین کے مطابق غیر ملکی قرضوں کی ادائیگی رزمبادلہ ذخائر میں کمی کا باعث بن رہی ہے۔ زرمبادلہ ذخائر پر دباو کم کرنے کے لیے غیر ملکی مہنگے قرضوں کا حصول ناگزیر ہے۔

مزید : بزنس


loading...