چیف جسٹس کا 5 لاکھ روپے سپریم کورٹ رجسٹرار سے لے کرفٹ پاتھ سکول کے بچوں کو سہولیات کی فراہمی کا حکم

چیف جسٹس کا 5 لاکھ روپے سپریم کورٹ رجسٹرار سے لے کرفٹ پاتھ سکول کے بچوں کو ...
چیف جسٹس کا 5 لاکھ روپے سپریم کورٹ رجسٹرار سے لے کرفٹ پاتھ سکول کے بچوں کو سہولیات کی فراہمی کا حکم

  


کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیف جسٹس آف پاکستان نے سیکرٹری تعلیم سندھ کو 5 لاکھ روپے سپریم کورٹ رجسٹرار سے لے کر کلفٹن میں فٹ پاتھ پر قائم سکول کے بچوں کو سہولیات کی فراہمی کا حکم دے دیا۔

کلفٹن کے فٹ پاتھ پر قائم سکول کے کیس کی سماعت سپریم کورٹ رجسٹری کراچی میں ہوئی ، چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ سکول کیلئے ہم بہتر جگہ دلادیں گے اور جب تک سکول کی بہتر جگہ نہیں ملتی اسے ختم نہ کیا جائے۔چیف جسٹس نے سکول میں فوری سہولیات فراہم کرنے کا حکم دیتے ہوئے سیکرٹری ایجوکیشن کو فوری طور پر سکول کا دورہ کرنے کی ہدایت کردی۔ چیف جسٹس نے ہدایت کی کہ سپریم کورٹ کے رجسٹرار سے 5 لاکھ روپے لے کر سکول کو سہولیات فراہم کی جائیں اور بعد میں پیسے واپس کردیے جائیں ۔

متعلقہ خبر: ایک سال خاموش رہا ،جب دیکھا کہ لوگوں کا کوئی پرسان حال نہیں تو سوموٹو ایکشن لینا شروع کیے: چیف جسٹس

واضح رہے کہ کلفٹن میں ایک این جی او کے تحت فٹ پاتھ پر سکول قائم کیا گیا ہے جسے سندھ ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نے ختم کرنے کا حکم دیا تھا۔ سپریم کورٹ میںکیس کی سماعت کے دوران سکول کے بچے بھی عدالت میں پیش ہوئے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /سندھ /کراچی


loading...