اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا مقبوضہ کشمیرپربیان، بھارت کااظہار ’تکلیف‘

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا مقبوضہ کشمیرپربیان، بھارت کااظہار ’تکلیف‘
اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا مقبوضہ کشمیرپربیان، بھارت کااظہار ’تکلیف‘

  



نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کی جانب سے مقبوضہ کشمیرکی تشویشناک صورت حال پر بیان نے بھارت کواظہار ’تکلیف‘پر مجبور کردیا۔انتونیو گوتریس نے کشمیر سے متعلق دیئے گئے بیان میں کہا تھا کہ مقبوضہ کشمیر  کی صورتحال پر تشویش ہے اور  یہ مسئلہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جائے۔

ٹائمز آف انڈیا کی ایک رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل جو کہ پاکستان کے دورے پر ہیں نے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کی ہے جس پر بھارت نے احتجاج کرتے ہوئے سخت الفاظ کی ادائیگی کی ہے۔

ہٹ دھرم بھارت نے مسلمانوں کی مقبوضہ وادی کو اپنا اٹوٹ انگ قرار دیتے ہوئے بھارتی وزارت خارجہ کے ترجما ن نے کہا ہے کہ ”مقبوضہ جموں و کشمیربھارت کا اٹوٹ انگ ہے اور رہے گا۔ ترجمان نے گھسے پٹے بیان کو دہرانے کے بعد یہ بھی کہہ دیا کہ یہ معاملہ دونوں ملک باہم حل کریں گے اس حوالے سے کسی کی ثالثی کی ضرورت ہے۔اپنی ہٹ دھرمی کو ترجمان نے کچھ یوں بیان کیا کہ ’کشمیر پر بھارت کی پوزیشن میں کوئی تبدیلی نہیں آئی“۔

یاد رہے گزشتہ روز اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انتونیوگوتریس نے دونوں ملکوں میں ثالثی کی پیشکش کرتے ہوئے کہا تھاکہ کشمیر میں انسانی حقوق کا احترام کیا جانا چاہیے اور اسے اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیاجائے۔ انہوں نے لائن آف کنٹرول کی صورتحال پر بھی تشویش کا اظہارکیاتھا جبکہ پاکستان کی جانب سے کرتارپور راہداری کو امن کی کوشش قراردیا تھا۔

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا یہ بھی کہناتھا کہ وہ پاکستانیوں کی محبت میں گرفتار ہوگئے ہیں،پاکستان نے اپنی محبت اور شفقت سے لاکھوں افغان مہاجرین کی میزبانی کی۔

مزید : اہم خبریں /قومی /بین الاقوامی